ایک صارف کی اپنی تخلیق کردہ فیس لفٹ،ٹویوٹا گرینڈی۔

whatsapp-image-2017-06-16-at-6-37-48-pm
مشہور ماہرِنفسیات جوزف سِگرے نے ایک مرتبہ کہا تھا کہ ”جب آپ کسی سواری کی خریداری کر رہے ہوں،تو آپ ایک ایسی سواری کی تلاش میں ہوتے ہیں جس میں آپ کے وجود”سیلف کنسیپٹ“کے تینوں پہلو ہوں: آپ کیا سمجھتے ہیں کہ آپ کیا ہیں،آپ کیا بننا چاہتے ہیں اور آپ کیا چاہتے ہیں کہ دوسرے آ پ کو کیسے دیکھیں۔اس کہاوت کا پہلا حصہ بلال محمودجو کہ پاک وہیل کے ایک پرانے ممبر ہیں پر پورا اترتا ہے۔جنہوں نے اپنی نئی کرولا کے ایکسٹیریئر کو نئے سرے سے بنا کر اپنی تخلیقی صلاحیتوں کو اجاگر کیا۔
بلال کا کہنا تھا کہ ’میں ٹویوٹا گرینڈی کی نئی فیس لِفٹ حاصل کرنے کیلئے جانا چاہتا تھا مگر بد قسمتی سے ڈیلرز اس نئی آنے والی کرولا کے ہایئر ماڈل کے آرڈرز نہیں لے رہے تھے۔زیادہ تردوسرے صارف جو کہ مزید آٹھ سے نو ماہ انتظار کرنا چاہ رہے تھے بلال نے اس سے کچھ بالکل الٹ کرنے کی ٹھانی۔انہوں نے موجودہ ٹویوٹا کرولاگرینڈی خریدی اور نئی باڈی کٹِ تھائلینڈسے امپورٹ کی۔پاک وہیل سے گفتگو کے دوران بلال نے یہ نکشاف بھی کیا کہ اس پورے عمل میں ان کا خرچ محض ایک لاکھ اسی ہزار روپے آیا ہے جس میں امپورٹ کے اخراجات،سب کچھ لگوانا اور باڈی کٹِ کو رنگ کرنا بھی شامل ہے

whatsapp-image-2017-06-16-at-6-37-25-pmwhatsapp-image-2017-06-16-at-6-37-28-pmwhatsapp-image-2017-06-16-at-6-37-31-pmwhatsapp-image-2017-06-16-at-6-37-33-pmwhatsapp-image-2017-06-16-at-6-37-39-pmwhatsapp-image-2017-06-16-at-6-37-43-pmwhatsapp-image-2017-06-16-at-6-37-48-pm

Hanan is an avid auto enthusiast with a flair for writing and playing games. He loves traveling, deciphering political maneuvering and exploring the realms of coding & graphic designing.

Top