ایشیائی ترقیاتی بینک نے کراچی میں بس ریپڈ ٹرانزٹ سسٹم کے لیے 235 ملین ڈالرز کے قرضے کی منظوری دے دی


ایشیائی ترقیاتی بینک (ADB) نے جدید توانائی اور موسمیاتی تبدیلی کے مقابلے کی خصوصیات رکھنے والا بس ریپڈ ٹرانزٹ (BRT) سسٹم بنانے کے لیے 235 ملین ڈالرز کے بڑے قرضے کی منظوری دے دی ہے۔ اس کا ہدف کراچی کے عوام کو معیاری پبلک ٹرانسپورٹ تک بہتر رسائی فراہم کرنا ہے، جو پاکستان کا سب سے بڑا اور سب سے زیادہ آبادی رکھنے والا شہر ہے۔ 

کراچی بس ریپڈ ٹرانزٹ ریڈ لائن پروجیکٹ 26.6 کلومیٹر طویل بس ریپڈ ٹرانزٹ ریڈ لائن کوریڈور اور اس سے متعلقہ سہولیات دے گا۔ یہ متوقع طور پر 15 لاکھ افراد (کراچی کی تقریباً 10 فیصد آبادی) کو فائدہ پہنچائے گی جو ریڈلائن BRT اسٹیشن سے ایک کلومیٹر کے فاصلے پر رہتے ہیں۔ روزانہ 3 لاکھ سے زيادہ مسافروں کا ریڈ لائن BRT روٹس استعمال کرنا متوقع ہے۔ ADB ایشین انفرا اسٹرکچر انوسٹمنٹ بینک اور ایجنسی فرانسیس ڈی ڈیولپمنٹ کی جانب سے 100، 100 ملین ڈالرز کے دو قرضوں کا بندوبست کرے گا تاکہ اس منصوبے کے تعمیراتی کام اور سازوسامان کی لاگت کو پورا کیا جا سکے۔ 

ریڈ لائن BRT کوریڈور مکمل طور پر نئے سرے سے تعمیر ہوگا۔ اس میں 29 اسٹیشنز کی تعمیر اور 26.6 کلومیٹر کے فاصلے تک مخصوص لینز کی تعمیر، ہر سمت میں 6 لین تک کے مکسڈ ٹریفک روڈ وے کی بہتری، کوریڈور کو موسمیاتی تبدیلیوں سے محفوظ رکھنے کے لیے ڈرینج سسٹم کی بہتری، بغیر موٹر کی ٹرانسپورٹ کی تنصیب جیسا کہ بائیسکل لینز کی تعمیر، مختلف مقامات پر آن-اسٹریٹ پارکنگ اور سرسبز حصوں کی شمولیت، بہتر سائیڈ واکس اور توانائی کے حوالے سے مؤثر اسٹریٹ لائٹس شامل ہیں۔ 

اس منصوبے کا نتیجہ کراچی میں ماحول دوست BRT آپریشنز کے قیام کی صورت میں نکلے گا، جس میں متعلقہ ٹرانسپورٹ اتھارٹیز کی صلاحیتوں کو بہتر بنانا، ایک مؤثر پبلک کمیونی کیشنز کمپین، BRT بزنس ماڈل اور سبسڈی سے پاک آپریشنز کی تیاری،  بس انڈسٹری ٹرانزیشن پروگرام کا نفاذ، بشمول فلیٹ اسکریپنگ پروگرام اور کمپنسیشن میکانزم اور BRT فلیٹ، فیڈر ای-وہیکلز، انٹیلی جنٹ ٹرانسپورٹ سسٹم اور ایک بایوگیس پلانٹ شامل ہیں۔ 

ADB گرین کلائمٹ فنڈ (GCF) کی جانب سے بھی 37.2 ملین ڈالرز کا قرضہ اور 11.8 ملین ڈالرز کی گرانٹ دے گا۔ GCF گرانٹ ماحولیاتی تبدیلی سے مطابقت رکھنے کے اقدامات کے لیے استعمال کی جائے گی۔ اس میں جدید ڈرینیج فیچرز جیسا کہ bioswales  شامل ہیں۔ اسے بعد از منصوبہ اخراج کی نگرانی سرگرمیں اور فیڈر ای-وہیکلز کے لیے بھی استعمال کیا جائے گا۔ 

دوسری جانب GCF کا قرضہ بایو گیس پلانٹ میں سرمایہ کاری کے ساتھ ساتھ بنیادی ڈیزل بس ٹیکنالوجی سے CNG ہائبرڈ بس ٹیکنالوجی کی طرف منتقلی پر آنے والی اضافی لاگت پر استعمال ہوگا، جس میں بھینسوں کے فضلے سے نکلنے والی بایومیتھین گیس استعمال ہوگی۔


Google App Store App Store

My name is M. Ali Laghari and I love to read and write about Cars.

Top