چینی ہیوی بائیک: خریدے جانے کے قابل یا پیسے اور وقت کا زیاں؟


طاقتور انجن کی حامل موٹر سائیکل کو عرف عام میں ہیوی بائیک کہا جاتا ہے۔ عام تاثر یہی ہے کہ ہیوی بائیک کی قیمت بہت زیادہ ہوتی ہے اور کچھ عرصے پہلے تک یہ بات بالکل درست بھی تھی۔ البتہ بیرون ممالک سے درآمدات میں اضافے اور عوام میں ان موٹرسائیکلوں سے متعلق بڑھتی ہوئی آگہی بعد صورتحال قدرے مختلف ہوچکی ہے۔ موٹر سائیکل تیار کرنے والے اداروں کی بڑھتی ہوئی دلچسپی سے بھی مقامی مارکیٹ میں کئی طرح کی اسپورٹس اور ہیوی بائیکس دستیاب ہوچکی ہیں۔

مارکیٹ میں دستیاب 250cc انجن والی استعمال شدہ ہیوی بائیک کی قیمت ساڑھے 4 لاکھ سے ساڑھے 7 لاھ روپے تک ہے۔ محض شوق کی تسکین کے لیے اتنی زیادہ رقم خرچ کرنا ہر شخص کے بس کی بات نہیں۔ یہی وجہ ہے کہ پاکستان میں چین سے درآمد شدہ موٹر سائیکلوں کو توجہ حاصل ہورہی ہے۔ ان چینی ہیوی بائیکس کی قیمت ڈھائی لاکھ سے 4 لاکھ روپے کے درمیان ہے۔ کم قیمت ہونے کے باوجود یہ چینی موٹر سائیکلیں “ہیوی بائیک” میں سفر کرنے کا بھرپور لطف فراہم کرسکتی ہیں۔ چونکہ پاکستان میں بہت سے درآمد کنندگان غیر معیاری بائیکس منگوا کر بھی فروخت کر رہے ہیں اس لیے خدشہ ہے کہ ان موٹر موٹر سائیکلوں پر بھی سستی اور غیر معیاری کا ٹھپہ لگ جائے گا۔ بہرحال، ہمیں مقامی مارکیٹ میں نت نئی موٹر سائیکلوں کا خیر مقدم کرنا چاہیے۔ جس سے صارفین کو انتخاب کے بہتر مواقع حاصل ہوسکتے ہیں۔


Top