ڈائی ہاٹسو موو – پاکستان میں دستیاب بہترین 660cc میں سے ایک

187521_2

پچھلے تین چار سالوں کے دوران 660cc گاڑیوں کو کافی مقبولیت حاصل ہوئی ہے جس کی بنیادی وجوہات میں ایندھن بچانے کی صلاحیت، جدید سہولیات اور آرامدے سفر شامل ہیں۔ چھوٹے سائز اور قیمت میں کم ہونے کی وجہ سے بھی ان گاڑیوں کو کافی پسند کیا جارہا ہے۔ پاکستان میں گزشتہ سالوں کے دوران متعدد 660cc گاڑیاں درآمد کی گئی ہیں۔ انہی گاڑیوں میں سے ایک جاپانی ساختہ ڈائی ہاٹسو موو (Move) بھی ہے کہ جسے شہری سفر کے لیے بہترین سمجھا جاتا ہے۔دیگر 660cc گاڑیوں پر ڈائی ہاٹسو موو کو ترجیح دینے کے اہم عوامل پر نظر ڈالتے ہیں۔

٭ بہترین ڈیزائن

ڈائی ہاٹسو موو کا ڈیزائن اس کی سب سے زیادہ قابل ذکر خصوصیات میں سے ایک ہے۔ ایک طرف اس گاڑی کا مختصر سائز پتلی گلیوں اور شدید ٹریفک میں سفر آسان بناتی ہے تو دوسری طرف اس میں پانچ افراد کے آرامدے سفر کی بھی گنجائش موجود ہے۔ اس کا موڑ رداس (turning radius) بھی بہت اچھا ہے جس سے تنگ جگہوں پر گاڑی پارک کرنے میں بھی آسانی رہتی ہے۔ ڈرائیور کی سہولت کو مدنظر رکھتے ہوئے گاڑی کے ڈیش بورڈ میں سامان رکھنے کے لیے زیادہ جگہ فراہم نہیں کی گئی۔ ایک مختصر ہیچ بیک ہونے کے باوجود گاڑی کے پچھلے حصے میں سامان رکھنے کی مناسب جگہ موجود ہے اور درمیانے سائز کے 2 بیگ یاپھر 19 لیٹر کی 2 بوتلیں باآسانی سمو سکتے ہیں۔ ڈائی ہاٹسو موو کے فرش کا زمین سے فاصلہ (ground clearance) بھی بہت اچھی ہے اور ہمارے یہاں کی سڑکوں پر موجود اسپیڈ بریکرز سے گزرتے ہوئے زیادہ پریشانی نہیں ہوتی۔ ہاں اگر بہت زیادہ وزن کے ساتھ سفر کریں گے پھر اس ضمن میں تھوڑی بہت مشکل پیش آسکتی ہے۔

10502004_201405i

٭ ایندھن کی بچت

ٹریفک کی بدنظمی کو مدنظر رکھتے ہوئے ڈائی ہاٹسو میں ایکو-آئیڈل (eco-idle) ٹیکنالوجی شامل کی گئی ہے۔ اس ٹیکنالوجی کی مدد سے جب جب گاڑی کا بریک لگتا ہے تب تب انجن کو ایندھن کی فراہمی بند ہوجاتی ہےجبکہ بیٹری پر چلنے والی تمام چیزیں کام کرتی رہتی ہیں۔ اور پھر ایکسلریٹر دبانے پر انجن کو ایندھن کی فراہمی پھر شروع ہوجاتی ہے۔ بدقسمتی سے پاکستان کا شمار بھی ان ممالک میں ہوتا ہے کہ جہاں ٹریفک کی بدنظمی روزانہ کا معمول ہے۔ اور اس صورتحال میں ہمارے لیے ایکو-آئیڈل ٹیکنالوجی کسی انعام سے کم نہیں ہے۔ اسی ٹیکنالوجی کی وجہ سے ڈائی ہاٹسو موو صرف ایک لیٹر میں 20 سے 22 کلومیٹر تک سفر کرسکتی ہے۔

ecoIDLE

٭ زبردست گرفت

جاپانی ادارے نے اپنی 660cc گاڑی میں ٹریکشن کنٹرول سسٹم بھی شامل کیا ہے جس سے ڈرائیور صاحبان کو اونچے نیچے،ریتیلے اور گیلے رستوں پر سفر کے دوران کسی مسئلے کا سامنا نہیں کرنا پڑتا۔آسان لفظوں میں کہا جائے تو یہ سسٹم گاڑی کی گرفت کو مزید بہتر بناتا ہے اور آپ تیز برسات میں بھی مکمل اطمینان اور اعتماد سے سفر کرسکتے ہیں۔

پاک ویلز کے ذریعے اپنی پسندیدہ گاڑی پاکستان منگوانے کے لیے یہاں کلک کریں

tractionControl_m_m

٭ بعد از استعمال فروخت اور پرزوں کی دستیابی

ہماری مارکیٹ میں گاڑیوں کی بعد از استعمال فروخت (re-sale) کی قدر کو بہت اہمیت دی جاتی ہے اور ڈائی ہاٹسو موو اس پیمانے پر بھی خود کو منواچکی ہے۔ مٹسوبشی، نسان اور مزدا کی طرح پاکستان میں ڈائی ہاٹسو کو بھی ایک معتبر کار ساز ادارہ سمجھا جاتا ہے اور یہی وجہ ہے کہ 660cc موو کی re-sale بھی بہت مناسب ہے۔ موو کے پرزوں کی بات کریں تو پاکستان کے تقریباً تمام ہی بڑے شہروں میں یہ باآسانی دستیاب ہے۔

2015-Daihatsu-Move-interior

٭ چھوٹے خاندان کے لیے موزوں

میری رائے میں ڈائی ہاٹسو موو ایک چھوٹے خاندان کے لیے بہترین گاڑی ہے۔بہترین سہولیات، آرامدے سفر اور ایندھن بچانے کی صلاحیت سمیت ہر زاویے سے موو کو دیگر مدمقابل گاڑیوں پر ملکہ حاصل ہے۔ حفاظتی سہولیات کی بات کریں تو Move کی اگلی نشستوں پر دو ایئربیگز کے علاوہ چور لاک اور EB بھی شامل ہیں۔ اس کے علاوہ Move میں پاور اسٹیئرنگ اور پاور ونڈوز بھی دیئے گئے ہیں جو اس کی قیمت میں دستیاب دیگر مقامی تیار شدہ گاڑیوں میں نایاب ہیں۔ دیگر ہیچ بیکس کی طرح اس کا A/C بھی بہت اچھا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: سوزوکی آلٹو بمقابلہ ڈائی ہاٹسو میرا – دو چھوٹی جاپانی گاڑیوں کا موازنہ

اگر آپ ایک خوبصورت اور جدید خصوصیات کی حامل گاڑی لینا چاہتے ہیں تو میں آپ کو ڈائی ہاٹسو مُوو پر نظر ڈالنے کا مشورہ دوں گا۔ مجھے پوری امید ہے کہ یہ 660cc گاڑی آپ کو بالکل مایوس نہیں کرے گی۔

Student at a Business school. Passionate about cars.

  • RT

    iski price nae dikh rahi article me.

Top