جدید انداز کی حامل نئی ٹویوٹا لینڈ کروزر 2015 – اب پاکستان میں!

featured

ٹویوٹا اپنی SUV کی فہرست میں بہتر سے بہترین گاڑیوں کا اضافہ کرنے کی کوششیں کر رہا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ ماضی قریب میں ہمیں معروف برانڈ لینڈ کروزر کے زمرے میں جدید اور پرتعیش لینڈ کروزر پراڈو نظر آئی جو رولز رائس کی SUV رینج روور اور دیگر ہم عصر گاڑیوں مثلاً پورشے کاین، بی ایم ڈبلیو X5، مرسڈیز G ویگن اور مستقبل قریب میں پیش کی جانے والی بینٹلے اور لمبورگینی کا بھی مقابلہ کرسکتی ہے۔

شاید بی ایم ڈبلیو X5 اور بینٹلے SUV کو آپ 4×4 لینڈ کروزر اور رینجر روور کی فہرست میں شامل نہ کرنا چاہیں لیکن حقیقت یہ ہے کہ دونوں اول الذکر گاڑیوں نے طویل عرصے تک پرتعیش SUV رکھنے والوں کے دلوں پر راج کیا ہے۔ جبکہ لینڈ کروزر کو عام 4×4 گاڑی سمجھا جاتا رہا ہے اور یہ تصور نئی لینڈ کروزر ZX کی آمد سے ختم ہونے والا ہے۔

ہم آج جس گاڑی کا ذکر کر رہے ہیں وہ لینڈ کروزر ZX کا فیس لفٹ یعنی بہتر انداز ہے۔ اسے معیار کے اعتبار سے پاکستان میں درآمد ہونے والی تمام لینڈ کروزر میں سرفہرست رکھا جاسکتا ہے۔ ملک میں لینڈ کروزر کو پہلے ہی کافی مقبولیت حاصل ہے اور یہ شہری و دیہاتی علاقوں میں سفر کرنے والوں کی پسندیدہ برانڈ ہے۔ اس کے علاوہ پاکستان میں نیٹو افواج کی نقل و حرکت بھی اسی گاڑی میں دیکھی گئی ہے جس کے بعد اسے ‘فوجی گاڑی’ کا درجہ بھی دیا جا چکا ہے۔

لینڈ کروزر کا نیا انداز پہلے کے مقابلے میں بہت بہتر ہے۔ گوکہ ٹویوٹا نے پچھلے نسخے کو 4×4 گاڑیوں کی فہرست میں شامل کروانا چاہا لیکن اس میں یورپی SUVs والی سہولیات اور ایندھن کی کفایت جیسی خصوصیات کی عدم موجودگی کے باعث ایسا نہ ہوسکا۔ نئی لینڈ کروزر میں بظاہر تبدیلیاں نظر نہیں آتیں لیکن حقیقت میں ان تمام چیزوں کا بخوبی خیال رکھا گیا ہے جو پرتعیش SUV کا خاصہ ہیں۔

ٹویوٹا کی جدید لینڈ کروزر کو محض ‘پہلے سے بہتر انداز’ قرار دے رہا ہے کیوں کہ اس کے اگلی جانب تین گِرل اور پچھلی جانب دروازے کو بھی نیا انداز دیا گیا ہے۔ اس کے علاوہ چھت کی شکل بہتر بنائی گئی ہے اور ایل ای ڈئی لائیٹس کو بھی نئی صورت دی گئی ہے جس سے وہ دن کی روشنی میں بھی بہت نمایاں نظر آتی ہیں۔ ان تمام تبدیلیوں کے بعد یہ لینڈ کروز مجموعی طور پر پہلے سے بہتر اور دلکش نظر آتی ہے۔

گاڑی کے اندر نظر ڈالیں تو یہاں بھی بہت سی چیزیں نئے انداز سے ملیں گی جن میں نئے سوچز اور ڈسپلے بھی شامل ہے۔ ڈیش بورڈ پر موجود 6 میٹرز کو ایل ای ڈی لائٹس سے آراستہ کیا گیا ہے جس سےایک ہی نظر میں گاڑی سے متعلق معلومات دیکھی جاسکتی ہیں۔ میٹر بورڈ پر باریک تاروں پر مشتمل ڈیزائن بھی واضح ہے اور اس پر 4.2 انچ کی ایل سی ڈی بھی لگائی گئی ہے۔ اس کے اندرونی حصے کو ہلکے خاکی اور سیاہ رنگ سے بنایا گیا ہے۔

سب سے زیادہ قابل ذکر تبدیلیاں ٹیکنالوجی کے زمرے میں کی گئی ہیں۔ لینڈ کروزر ZX میں ٹویوٹا سیفٹی سینس P میں شامل تمام سہولیات ہیں۔ یہ پیکیج ٹویوٹا سیفٹی سینس C سے بہتر ہے جسے رواں سال ٹویوٹا کروالا کے ساتھ جاپان میں پیش کیا گیا تھا۔ اس میں گاڑی کو پیدل چلنے والوں کی ٹکر سے بچانے، ریڈار کے ذریعے گاڑی کو چلانے، مخصوص لین کی خلاف ورزی پر انتباہ، روشنیوں میں خود کار کمی و بیشی، انتہائی کم روشنی میں سفر کے خطرات سے آگاہ کرنے اور پہیوں میں ہوا کا دباؤ کم اور زیادہ ہونے کی اطلاع دینے جیسے نظام شامل ہیں۔

لینڈ کروز ZX میں 4600 سی سی V8 پیٹرول انجن ہے جس کی رفتار 318 بریک ہارس پاور اور ٹارک 460 نیوٹن میٹر ہے۔ اسے 6 اسپیڈ آٹو میٹک ٹرانسمیشن سے منسلک کیا گیا ہے۔ اس کے طرز تخلیق اور جدید ٹیکنالوجی نے چار پہیوں پر چلنے والی گاڑی کا لطف دو بالا کردیا ہے۔

مجھے امید ہے کہ فوجی ٹینک کے طرز پر بننے والی یہ گاڑی اپنے نئے انداز سے ایک بار پھر پاکستانیوں کا دل جیت لے گی۔ ذیل میں ہم نئی اور پرانی لینڈ کروزر ZX پیش کر رہے ہیں تاکہ قارئین دونوں گاڑیوں کے جداگانہ انداز کو دیکھ سکیں۔ تصویر کو مزید بہتر انداز سے دیکھنے کے لیے اس پر کلک کریں۔

back front Interior side-back side-back-2 Side-front Side-front-2

Top