‏IMC نے اپنی گاڑیوں کی قیمتوں میں 8,30,000 روپے تک کا اضافہ کردیا


ٹویوٹا IMC نے اپنی گاڑیوں کی قیمتوں میں 8,30,000 روپے تک کا اضافہ کردیا ہے۔ 

تمام قیمتیں یہاں دیکھیں: 

کاریں بنانے والے مقامی اداروں کا ہر بار قیمتیں بڑھانے پر ایک ہی مشترکہ بہانہ ہوتا ہے کہ امریکی ڈالر کے مقابلے میں روپے کی قدر گھٹ رہی ہے، البتہ سوال یہ ہے کہ کیا قیمت میں اضافہ مقامی مارکیٹ میں ڈالر کی شرحِ تبادلہ سے جڑا ہوا ہے۔ قارئین کے لیے یہ بات قابلِ ذکر ہے کہ پاکستان میں گاڑیوں کی قیمتوں میں اضافہ امریکی ڈالر کی قیمت بڑھنے سے منسلک نہیں ہے۔ 

اس معاملے میں ایک مثال ٹویوٹا فورچیونر کی قیمت میں حالیہ اضافے بھی ہے، جو اب 80 لاکھ روپے سے بھی زیادہ کی ہو گئی ہے۔ جب یہ گاڑی پاکستان میں پہلی مرتبہ متعارف کروائی گئی تھی تو اس کی قیمت 60 لاکھ تھی۔ سوال یہ ہے کہ کیا پاکستانی روپے کی قدر میں اتنی گراوٹ آئی ہے کہ اس گاڑی کی قیمت میں 20 لاکھ روپے کا اضافہ کردیا گیا۔ 

ٹویوٹا کے علاوہ ہونڈا، الحاج فا، اِسوزو اور پاک سوزوکی بھی اپنی گاڑیوں کی قیمتیں بڑھا چکے ہیں۔ 

اس بارے میں اپنی رائے نیچے تبصروں میں پیش کیجیے۔ 


Google App Store App Store

My name is M. Ali Laghari and I love to read and write about Cars.

Top