مرسڈیز-بینز کی جانب سے جدید برقی گالف کار متعارف!

Mercedes Luxury Golf Car

ٹیسلا موٹرز اور اس کے سربراہ ایلون مُسک کا نام برقی گاڑیوں کو نئی جہت فراہم کرنے والوں کے طور پر جانا جاتا ہے۔ ٹیسلا سے قبل برقی گاڑیاں بہت سست رفتار اور عجیب و غریب شکل کی سمجھی جاتی تھیں۔ عام طور پر گالف کھیلنے والوں کے زیراستعمال مخصوص گاڑی (جسے گالف کارٹ) کہا جاتا ہے کو بجلی سے چلنے والی سست رفتار گاڑیوں سے مشابہت دی جاتی تھی۔ لیکن اب ٹیسلا نے جدید برقی گاڑیاں پیش کر کے اس تصور کو یکسر بدل کر رکھ دیا ہے۔ اور اس کی دیکھا دیکھی جرمن ادارے مرسڈیز-بینز (Mercedes-Benz) نے بھی گالف کارٹ کو جدت سے ہم آہنگ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

یہ بات جان کر شاید بہت سے قارئین حیران ہوں گے کہ گزشتہ 100 سالوں میں بہترین سیڈان گاڑیاں پیش کرنے والی کمپنی مرسڈیز –بینز نے برٹش اوپن کے دوران گاڑیا گالف کار (یہ’کارٹ’ نہیں ہے) متعارف کروائی ہے۔ مرسڈیز اور گاڑیا کی پیش کردہ گالف کار میں دروازوں کے علاوہ ہر وہ چیز شامل ہے جو کسی سیڈان گاڑی کا خاصہ سمجھی جاتی ہے۔

یہ بھی پڑھیں: مرسڈیز بھی برقی گاڑیوں کے میدان میں؛ ٹیسلا کا مقابلہ کرنے کے لیے پُرعزم

مرسڈیز کی جدید گالف کار کے ظاہری انداز پر نظر ڈالیں تو اگلے اور پچھلے حصے میں LED لائٹس، الائے رمز، گالف کا بیگ تھامنے کے لیے اسپائلر اور کاربن فائبر سے تیار کردہ چھت دیکھ سکتے ہیں۔ البتہ گاڑی کے اگلے حصے میں آپ کو مرسڈیز کا دائرہ نما لوگونظر نہیں آئے گا بلکہ اس کی جگہ گاڑیا کا ابھرا ہوا نشان بنایا گیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: پرتعیش گاڑیوں کی فروخت میں مرسڈیز نے BMW کو پیچھے چھوڑ دیا

گاڑی کے اندر داخل ہو کر احساس ہوگا کہ جیسے آپ کسی پُرتعیش گاڑی میں بیٹھے ہوں۔ نشست کے نیچے ریفریجریٹر، ڈیش بورڈ پر گالف کی گیندیں رکھنے کے لیے خصوصی ٹرے اور 10.1 انچ کی ٹچ اسکرین دی گئی ہے جو بلوٹوتھ اسپیکر سے منسلک ہے۔ گالف کار کی سیٹس میں خصوصی چمڑے سے بنائی گئی ہیں۔ تکنیکی اعتبار سے دیکھا جائے تو برقی گالف کار کی رفتار صرف 30 کلومیٹر فی گھنٹہ ہے اور یہ چھ گھنٹے میں مکمل چارجنگ کے بعد 80 کلومیٹر تک سفر کرسکتی ہے۔

فی الحال مرسڈیز نے 2 ہی گاڑیا گالف کار بنائی ہیں۔ اس گاڑی کی مقبولیت دیکھنے کے بعد مرسڈیز اور گاڑیا اس کی مزید تیاری پر غور کریں گے۔ چونکہ گالف کا کھیل اعلی طبقے کا کھیل سمجھا جاتا ہے اس لیے مرسڈیز کو گالف کار فروخت کرنے میں زیادہ مشکل نہیں پیش آنی چاہیے۔ بہرحال، دیکھنا یہ ہے کہ آیا پاکستان میں گالف کے شوقین افراد اس گاڑی کو خریدنے میں دلچسپی کا مظاہرہ کرتے ہیں یا نہیں۔

Adan Ali

Adan is a Tribe Leader at Drive Tribe, who writes to share his passion for cars, culture and gadgetry through words. So far his writings and contributions have been able to make their way to media outlets like PakWheels and Dawn. Reach out to him by tweeting @adanali12

Top