دنیا کی بہترین سیڈان میں سے ایک مرسڈیز E-کلاس پاکستان میں متعارف

mercedes-E-class-2017-4

پاکستان میں نئی مرسڈیز گاڑیاں پیش کرنے والے ادارے شاہنواز موٹرز نے ایک نجی تقریب کے دوران مرسڈیز E-200 (W213) کی نقاب کشائی کردی ہے۔ جرمن کار ساز ادارے مرسڈیز کی تیار کردہ E-200 ایک پرتعیش سیڈان کے طور پرجانی جاتی ہے جس میں جدید ٹیکنالوجی اور بہترین خصوصیات شامل ہیں۔ عالمی سطح پر مرسڈیز E-کلاس کی پانچویں جنریشن شمالی امریکا کے بین الاقوامی آٹو شو میں متعارف کروائی گئی تھی۔ اس مرسڈیز سیڈان کا ظاہری انداز مرسڈیز S-کلاس (W222) اور مرسڈیز C-کلاس (W205) سے بہت میل کھاتا ہے۔

جرمن ادارے مرسڈیز –بینز کا دعوی ہے کہ اس نئی سیڈان کی تیاری میں 4 سال سے بھی زائد کا عرصہ لگا۔ اس دوران 1200 نمونے تیار کیے گئے اور انہیں تقریباً 1 کروڑ 20 لاکھ کلومیٹر تک چلایا گیا تاکہ اس سیڈان کو بہترین سفر کے قابل بنایا جاسکے۔ ہر ممکن مشکل ترین صورتحال پر بھی اس سیڈان کو جانچا گیا جس میں منفی درجہ حرارت والے برفانی علاقوں سے لے کر دنیا کے گرم ترین صحراؤں میں آزمائش بھی شامل ہے۔ عوام کے لیے پیش کرنے سے قبل مرسڈیز E-کلاس کو 10 ہزار سے زائد بریکنگ ٹیسٹ سے بھی گزارا گیا۔ ایک اندازے کے مطابق اس شاندار سیڈان کی تیاری میں 1200 انجینئرز نے حصہ لیا۔

پاکستان میں مرسڈیز E-کلاس کو 4-انلائن 1991cc انجن کے ساتھ پیش کیا گیا ہے۔ یہ انجن 135 کلو واٹ (181 بریک ہارس پاور) کے ساتھ 300 نیوٹن میٹر ٹارک بھی فراہم کرسکتا ہے۔اس طاقتور انجن کی موجودگی میں یہ گاڑی صرف 7.7 سیکنڈز میں 0 سے 100 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار پکڑسکتی ہے جبکہ اس کی زیادہ سے زیادہ رفتار 240 کلومیٹر فی گھنٹہ کو چھو سکتی ہے۔ مرسڈیز کی یہ سیڈان 9G-ٹرانک 9-اسپیڈ آٹو میٹک گیئر باکس کے ساتھ متعارف کروائی گئی ہے۔ دور جدید کی بہترین پرتعیش گاڑیوں میں سے ایک مرسڈیز E-کلاس کی قیمت 1,19,95,000 رکھی گئی ہے۔

یہ بھی پڑھیں: نو منتخب امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی رولز روئیس اور مرسڈیز گاڑیاں

Top