پرتعیش گاڑیوں کی فروخت میں مرسڈیز نے BMW کو پیچھے چھوڑ دیا

2013-Audi-S7-BMW-650i-Gran-Coupe-Mercedes-Benz-CLS550-4Matic

گزشتہ دس سالوں کے دوران پہلی بار جرمن کار ساز ادارے مرسڈیز-بینز (Mercedes Benz) نے پرتعیش گاڑیوں کی فروخت میں ہم وطن روایتی حریف BMW کو پیچھے چھوڑ دیا ہے۔ روال سال 2016 کی پہلی سہ ماہی میں مرسڈیز نے گاڑیاں فروخت میں BMW سے دوگنا اضافہ کیا۔

جنوری سے مارچ 2016 کے دوران دنیا بھر میں مرسڈیز نے 483,487 گاڑیاں جبکہ BMW نے 478,743 گاڑیاں فروخت کیں۔ مرسڈیز نے گزشتہ سال کے مقابلے میں 13 فیصد زائد گاڑیاں فروخت کی ہیں جبکہ BMW کی فروخت میں صرف 6 فیصد اضافہ ہوا ہے۔ سب سے زیادہ پرتعیش گاڑیاں فروخت کرنے والے کار ساز اداروں کی فہرست میں مرسڈیز اور BMW کے بعد تیسرا نمبر بھی جرمن کار ساز ادارے آوڈی کا ہے۔ آوڈی نے رواں سال کے ابتدائی تین ماہ کے دوران 455,750 فروخت کیں جو گزشتہ سال فروخت ہونے والی گاڑیوں کے مقابلے میں 4 فیصد اضافی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: 2017 آوڈی A3 کا نیا انداز؛ پہلے سے زیادہ جدید اور پُرکشش!

مرسڈیز نے اعلان کیا تھا کہ وہ سال 2020 تک پرتعیش گاڑیوں کی فروخت میں BMW کو پیچھے چھوڑ دے گا۔ تاہم تازہ ترین اعداد و شمار سے اندازہ ہوتا ہے کہ مرسڈیز کو روایتی حریف پر سبقت لے جانے کے لیے زیادہ انتظار نہیں کرنا پڑے گا۔ مرسڈیز کی تمام ہی گاڑیوں بشمول SUVs کی فروخت اس وقت زوروں پر ہے۔ ماہرین کا خیال ہے کہ رواں سال کی دوسری ششماہی میں E-کلاس کی آمد سے مرسڈیز گاڑیوں کی فروخت میں مزید تیزی آئے گی۔ مرسڈیز E-کلاس کو بہترین پرتعیش سیڈان گاڑی کے طور پر کاروباری حلقوں میں خاصی شہرت حاصل ہے۔ روایتی حریف BMW کی جانب سے E-کلاس کے مقابلے میں 5 سیریز پیش کی گئی تاہم 2017 تک اس سیریز کی نئی گاڑی متعارف کروائے جانے کا کوئی امکان نظر نہیں آرہا۔

اپنی مہنگی اور پرتعیش گاڑیوں کی وجہ سے مشہور مرسڈیز کی مجموعی فروخت میں اضافہ کی دلچسپ وجہ نسبتاً چھوٹی اور سستی A-کلاس کی مشہوری ہے۔ رواں سال کے ابتدائی سہ ماہی کے دوران مرسڈیز نے تقریباً ڈیڑھ لاکھ A-کلاس فروخت کی ہیں۔ یہ گزشتہ سال کے مقابلے میں تقریباً 26 فیصد زیادہ تعداد ہے۔ آوڈی بھی اسی طرز کی گاڑی A3 پریمئم کے نئے 2017 ورژن کی پیش کش کے بعد خریداروں کی توجہ حاصل کرنے کے لیے پرامید ہے۔ ان دونوں اداروں کی پیش رفت دیکھتے ہوئے اب BMW بھی مرسڈیز A-کلاس اور Audi A3 کے مدمقابل نئی گاڑی متعارف کروانے کے لیے مصروف ہوگیا ہے۔

یہاں یہ بات بھی قابل ذکر معلوم ہوتی ہے کہ سال 2016 کے ابتدائی تین ماہ میں گاڑیوں کی مجموعی فروخت کے اعتبار سے مرسڈیز سب پر بازی لے گیا تاہم مارچ کے مہینے میں BMW کی فرخت مرسڈیز اور آوڈی دونوں ہی سے زیادہ رہی۔ BMW نے اس ماہ 201,352 گاڑیاں فروخت کیں جبکہ مرسڈیز اور آوڈی کی فروخت ہونے والی گاڑیوں کی تعداد بالترتیب 198,921 اور 186,100 رہی تھی۔

پاکستان میں مرسڈیز کو آوڈی پاکستان کی جانب سے زبردست مسابقت درپیش ہے۔ آوڈی پاکستان نے رواں سال کے آغاز میں نئی آوڈی A4 کی فروخت کا آغاز کیا تھا۔پرتعیش گاڑیوں کی مارکیٹ میں آوڈی پاکستان کی سرگرمیوں نے مرسڈیز پاکستان کو بھی خواب غفلت سے جگایا جو اس زمرے کو نظر انداز کیے بیٹھا تھا۔ ان دونوں اداروں کے درمیان بہتر سے بہترین پیش کش کا مقابلہ دیکھ کر اندازہ لگایا جاسکتا ہے کہ اگر یہی مسابقت جاپانی اداروں کے درمیان ہوتی آج پاکستان میں گاڑیوں کا شعبہ کتنی ترقی کرچکا ہوتا۔

مرسڈیز E-کلاس کی چند تصویری جھلکیاں:

I am a visual communications artist, I use arts and visual content to tell automotive stories to people.

Top