نیشنل ہائی وے اتھارٹی موٹرویز اور ہائی ویز پر ٹول پلازوں اور سروس ایریا کو بہتر بناتا ہوا


سڑکوں پر سہولیات کی فراہمی اور صارفین کے تجربے کو بہتر بنانے کے لیے نیشنل ہائی وے اتھارٹی (NHA) ملک بھر کی موٹرویز اور ہائی ویز دونوں پر ٹول پلازوں کو بہتر بنانے اور سروس ایریاز میں سہولیات کی فراہمی کے لیے کام کر رہا ہے۔

جب سے وزیر مملکت برائے مواصلات مراد سعید نے عہدہ سنبھالا ہے NHA اپنے موٹرویز اور ہائی ویز کے ڈھانچے کو بہتر بنانے میں متحرک نظر آتا ہے۔ موجودہ حکومت سہولیات کی فراہمی کے ساتھ بنیادی ڈھانچے کو بہتر بنانے کا ہدف رکھتی ہے کیونکہ کہ صارفین کے لیے نیشنل ہائی وے اتھارٹی (NHA) کا پہلا تاثر ہوتے ہیں۔ محکمہ اپنے وژن کو آگے لے جانے اور سڑکیں استعمال کرنے والے افراد کو سہولیات کی فراہمی کے لیے ضروری انتظامات کرنے سے وابستہ ہے۔

NHA کے عہدیدار کے مطابق 21 ٹول پلازوں کو جدید سہولیات سے لیس کیا جا چکا ہے جبکہ باقی کو دسمبر 2018ء کے اختتام تک مکمل طور پر اپگریڈ کیا جائے گا۔ ہنگامی صورت سے نمٹنے کے لیے تمام ٹول پلازوں پر آگ بجھانے والے آلات فراہم کیے جائیں گے۔م زید یہ کہ اتھارٹی ٹول پلازوں اور اردگرد کی صفائی کو برقرار رکھنے پر بھی سختی کرنے کی خواہاں ہے۔ خوبصورتی میں اضافے کے لیے ٹول پلازوں پر مختلف پینٹنگز کے ساتھ ساتھ روشنی کے مناسب انتظامات بھی کیے گئے ہیں۔ “کلین اینڈ گرین پاکستان” مہم پر بھی کام کرتے کرتے ہوئے ماحول کو بہتر بنانے کے لیے مزید شجر کاری کی جا رہی ہے۔ سڑکوں پر موجود صارفین کے ساتھ تعلقات کو یقینی بنانے کے لیے ایک شکایتی و تجاویز بکس کی بھی ہر ٹول بوتھ پر تنصیب کو یقینی بنایا گیا ہے۔

موٹر وے پر سفر کرنے والوں کے لیے سروس ایریاز کو پینے کے صاف پانی، بجلی سے چلنے والے کولرز، بچوں کے لیے کھیلنے کی جگہ اور بیت الخلاء کی بہتر سہولیات سے بھی لیس کیا گیا ہے۔ موٹر وے (M-1) پر بنیادی سہولیات سے محروم سروس ایریاز کو اپگریڈ کیا گیا ہے۔ اس راستے پر ہکلہ سروس ایریا کو فلنگ اسٹیشن، ٹک شاپس اور لگژری ٹوائلٹس سے لیس کردیا گیا ہے تاکہ مسافروں کو بھیرہ جیسے دیگر بڑے سروس ایریاز جیسی سہولیات ملیں۔ اسی طرح رشکئی سروس ایریا کو نئے ریسٹورنٹ، نئی مسجد کی تعمیر، ٹک شاپ، پبلک ٹوائلٹس اور ایک فلنگ اسٹیشن سے لیس کردیا گیا ہے۔

NHA کی نظریں موٹرویز اور ہائی ویز پر صارفین کے تجربے بہتر بنانے کے لیے مسافروں کو بہترین ممکنہ سہولیات فراہم کرنے پر مرکوزہیں۔ ٹول پلازوں اور ریسٹ ایریاز کی اپگریڈیشن پاکستان میں روڈ انفرااسٹرکچرز کی ترقی کی جانب ایک بڑا قدم ثابت ہوگی۔

پاکستان میں روڈ نیٹ ورک کے بارے میں اس حالیہ پیشرفت پر آپ کا کیا خیال ہے؟ نیچے تبصروں میں ہمیں ضرور بتائیے۔


Ahmad Shehryar

An Electrical Engineer by profession who writes automotive content at Pakwheels and a photographer.

Top