جولائی 2019ء کے لیے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں برقرار


اپڈیٹ: 

عوام کو ریلیف دینے کے لیے وفاقی حکومت پاکستان نے جولائی 2019ء کے لیے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔ واضح رہے کہ OGRA نے پٹرول اور مٹی کے تیل کی قیمتیں کم کرنے کی تجویز دی تھی جبکہ ڈیزل کی قیمتیں بڑھانے کا مطالبہ کیا تھا۔ 

قبل ازیں: 

جمعہ 28 جون 2019ءکو آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی (OGRA) نے وفاقی حکومت کو تجویز دی تھی کہ ملک میں پٹرول کی قیمتیں کم کرے اور عوام کو ریلیف فراہم کرے۔ 

تفصیلات کے مطابق اتھارٹی نے زور دیا تھا کہ حکومت کو پٹرول کی قیمت میں 0.77 روپے فی لیٹر اور مٹی کے تیل کی قیمت میں 2.94 روپے فی لیٹر کمی کرنی چاہیے۔ مزید برآں، OGRA نے یہ بھی تجویز دی تھی کہ ہائی-اسپیڈ ڈیزل اور لائٹ-اسپیڈ ڈیزل کی قیمتیں بالترتیب 2.30 اور 0.26 روپے فی لیٹر بڑھائی جائیں۔ 

PakWheels.com سے بات کرتے ہوئے ایک صنعتی ماہر نے کہا کہ OGRA کی جانب سے کی گئی سفارشات مذاق کے سوا کچھ نہیں۔ اگر وہ عوام کو واقعی ریلیف دینا چاہتے ہیں تو انہیں قیمتوں میں زیادہ کمی کرنا ہوگی۔ 

حکومت حتمی فیصلہ 30 جون کو کرے گی اور نئی قیمتیں یکم جولائی 2019ء سے لاگو ہوں گی۔ 

موجودہ قیمتیں کچھ یوں ہیں:

پٹرول: 112.68 روپے فی لیٹر 

ہائی-اسپیڈ ڈیزل : 126.82 روپے فی لیٹر

مٹی کا تیل: 98.46 روپے فی لیٹر

لائٹ-اسپیڈ ڈیزل: 88.62 روپے فی لیٹر

واضح رہے کہ روپے کی قدر میں ہونے والی کمی کی وجہ سے مقامی آٹو میکرز مثلاً ٹویوٹا، ہونڈا، الحاج فا، اِسوزو اور پاک سوزوکی اپنی مصنوعات کی قیمتیں پہلے ہی بڑھا چکے ہیں۔ 

آٹوموٹو انڈسٹری کی ایسی ہی دیگر خبروں کے لیے پاک ویلز کے ساتھ رہیے۔ اپنے تبصرے ذیل میں پیش کیجیے۔


Google App Store App Store

My name is M. Ali Laghari and I love to read and write about Cars.

Top