پاک سوزوکی نے اپنی مسافر گاڑیوں کی قیمتوں میں 40,000 روپے تک کا اضافہ کردیا


پاک سوزوکی نے آج اعلان کیا ہے کہ کمپنی نومبر 2018ء سے اپنی مسافر گاڑیوں کی قیمتوں میں 40,000 روپے کا اضافہ کرے گی۔

یہ رواں سال کے آغاز سے اب تک پانچواں موقع ہے کہ پاک سوزوکی نے اپنی گاڑیوں کی قیمتیں بڑھائی ہیں۔ ذیل میں نظرثانی شدہ قیمتیں ہیں:

Pak Suzuki cars

البتہ پرانی قیمتیں کچھ یوں تھیں:

ماڈل گزشتہ قیمت – پاکستانی روپے
سوزوکی ویگن آر R VXR 1,144,000
سوزوکی کلٹس VXL 1,461,000
سوزوکی سوئفٹ NAV-MT 1,475,00
سوزوکی سوئفٹ NAV-AT 1,611,000
سوزوکی کلٹس VXR 1,340,000
سوزوکی ویگن آر VXL 1,234,000
سوزوکی کلٹس AGS 1,568,000

ڈالر کی بڑھتی ہوئی قیمت کے باعث ادارے نے ہر گاڑی پر 40,000 روپے کا اضافہ کیا ہے۔

اس کے علاوہ پاک سوزوکی کی جانب سے جمع کروائی گئی رپورٹ کے مطابق ادارے کا منافع 30 ستمبر 2018ء کو مکمل ہونے والی سہ ماہی پر 91 فیصد گھٹ کر 95 ملین ہو گیا ہے، جبکہ گزشتہ سال کی اسی سہ ماہی میں اس نے 1.10 ارب روپے کا منافع حاصل کیا تھا۔ فروخت کے حجم میں بھی گزشتہ سال ستمبر میں ختم ہونے والی سہ ماہی کے مقابلے میں 10 فیصد کمی آئی ہے۔

مزید یہ کہ پاک سوزوکی پہلے ہی مارچ 2019ء سے مہران کے خاتمے کا اعلان کر چکا ہے اور ملک میں مقامی طور پر بنائی جانے والی سوزوکی آلٹو 2019ء 660cc متعارف کروانے کا منصوبہ رکھتا ہے۔

تازہ ترین خبروں کے لیے PakWheels.com پر آتے رہیے۔


Top