پاک سوزوکی نے آلٹو اور موٹر سائیکلوں کی قیمتیں بڑھا دِیں


پاک سوزوکی نے ایک مرتبہ پھر اپنے آلٹو ویرینٹس اور موٹر سائیکلوں کی قیمتوں میں بالترتیب 85,000 اور 6,000 روپے تک کا اضافہ کردیا ہے کہ جو یکم اکتوبر 2019ء سے لاگو ہوگا۔ 

آٹوموبائل انڈسٹری مارکیٹ میں گھٹتی ہوئی طلب اور اس کے نتیجے میں آٹو مینوفیکچررز کی جانب سے اپنے پروڈکشن پلانٹس بند کرنے کی وجہ سے بدترین دور سے گزر رہی ہے۔ البتہ آٹوموٹو پروڈکٹس کی قیمتیں عوام کی پہنچ سے دور ہوتی چلی جا رہی ہیں۔ یہی دیکھ لیں کہ ملک کے سب سے بڑے آٹو مینوفیکچررز میں سے ایک پاک سوزوکی نے اپنی نئی 660cc سوزوکی آلٹو اور موٹر سائیکلوں کی قیمتیں بڑھا دی ہیں۔ نئی قیمتیں یکم اکتوبر 2019ء سے لاگو ہوں گی۔ کمپنی نے قیمتیں بڑھانے کے حوالے سے 30 ستمبر کو ملک بھر میں اپنے مجاز ڈیلرز کو ایک سرکلر جاری کیا ہے۔ یاد رکھیں کہ تمام ریٹیل یعنی خوردہ قیمتیں ایکس-فیکٹری پرائس اور فریٹ چارجز کی حامل ہیں کہ جو گاڑی کی ڈیلرشپس تک آمد پر لاگو ہوتا ہے۔ نوٹیفکیشن ظاہر کرتا ہے کہ سوزوکی آلٹو VXR کی قیمت میں 70,000 روپے کا اضافہ کیا گیا ہے جو 12,38,000 روپے کی پچھلی قیمت سے بڑھ کر اب 13,08,000 روپے ہو چکی ہے۔ 660cc آلٹو کا AGS ویرینٹ 85,000 روپے مہنگا ہو چکا ہے اور اس کی نئی قیمت اب 15,18,000 روپے ہے۔ آٹو گیئر شفٹ ویرینٹ کی پچھلی قیمت 14,33,000 روپے تھی۔ آلٹو کی پرانی اور نئی قیمتوں کا مکمل چارٹ یہ ہے: 

واضح رہے کہ کمپنی نے حال ہی میں اپنی متعدد کاروں کی بکنگ عارضی طور پر بند کردی تھی۔ اس میں آلٹو کا بنیادی ویرینٹ یعنی VX بھی شامل ہے۔ پاک سوزوکی کی دوسری تمام گاڑیوں کے مقابلے میں آلٹو کمپنی کی سیلز میں سب سے نمایاں ہے۔ آٹو میکر مالی سال ‏2019-20ء‎ کے پہلے دو مہینوں میں آلٹو کے 8,019 یونٹس فروخت کر چکا ہے۔ مزید برآں، اس عرصے میں ویگن آر کی فروخت میں تقریباً 71 فیصد کمی آئی ہے کیونکہ آلٹو نے ویگن آر کے صارفین حاصل کرلیے ہیں کیونکہ ویگن آر کی قیمت مقامی مارکیٹ میں 15 لاکھ روپے سے تجاوز کر چکی ہے۔ 

ایک اور نوٹیفکیشن کے مطابق کمپنی نے اپنی موٹر سائیکلوں کی قیمتوں میں 6,000 روپے تک کا اضافہ کیا ہے جو یکم اکتوبر 2019ء سے مؤثر ہے۔ سوزوکی کی موٹر سائیکلیں GD 110S، GS 150، GS 150 SE اور GR 150 اب مہنگی ہو چکی ہیں۔ پاک سوزوکی موٹر سائیکلوں کی قیمتوں کا چارٹ مندرجہ ذیل ہے کہ جو ہر ماڈل کی پرانی قیمتیں بھی ظاہر کر رہا ہے۔ 

بڑھتی ہوئی قیمتوں کی وجہ سے ملک میں گاڑیوں کی مجموعی فروخت میں زبردست کمی آ رہی ہے۔ پاک سوزوکی کی جانب سے قیمتیں بڑھانے کی وجہ بیان نہیں کی گئی۔ حالانکہ گزشتہ چند ماہ میں امریکی ڈالر کے مقابلے میں روپے کی قدر میں اضافہ بھی ہوا ہے۔ پاک سوزوکی کی مصنوعات میں آخری مرتبہ 2 اگست 2019ء کو نظر ثانی کی گئی تھی۔ 

پاک سوزوکی کی جانب سے قیمتوں میں تبدیلی پر اپنی رائے نیچے تبصروں میں پیش کیجیے۔ مزید خبروں کے لیے پاک ویلز کے ساتھ رہیے۔ 


Google App Store App Store

Apart from being an Electrical Engineer by profession, he is an automotive content writer at PakWheels, a web designer and a photographer.

Top