پارکنگ قوانین کی کھلم کھلا خلاف ورزی؛ ذمہ دار عوام ہیں یا کوئی اور؟

wrong parking

پاکستان کے ہر چھوٹے بڑے شہر میں پارکنگ قوانین کی خلاف ورزی عام دیکھی جاسکتی ہے۔ خاص طور پر اگر آپ گنجان آباد شہر مثلاً کراچی یا لاہور میں رہتے ہیں تو آپ کو سفر کرتے ہوئے جس مشکل کا سب سے زیادہ سامنا کرنا پڑتا ہے وہ گاڑی کو پارک کرنے کے لیے مناسب جگہ کی تلاش ہے۔ غلط پارکنگ کے باعث جو مسائل پیدا ہوتے ہیں ان میں ٹریفک جام ہوجانے کا مسئلہ سب سے زیادہ قابل ذکر ہے۔

Car being lifted

wrongly parked bikes

کچھ ڈرائیور صاحبان اتنی جلدی میں ہوتی ہیں کہ انہیں اس بات کا خیال ہی نہیں ہوتا کہ گاڑی ٹھیک جگہ پر پارک ہوئی ہے یا نہیں اور پھر ان کی جلدبازی کا خمیازہ دوسرے شخص کو بھگتنا پڑتا ہے۔ بہت سے لوگوں کو دیکھا گیا ہے کہ وہ اپنی گاڑی کچھ اس انداز سے کھڑی کرتے ہیں کہ وہاں دوسری گاڑی کی جگہ باقی نہیں رہتی۔ بعض لوگ پہلے سے کھڑی ہوئی گاڑی کے پیچھے اپنی گاڑی پارک کرتے ہوئے بھی نہیں سوچتے کہ ان کی غیر موجودگی میں دوسری گاڑی کے مالک کو کیا کچھ مشکلات درپیش ہوسکتی ہیں۔ خاص طور پر موٹر سائیکل کے مالکان اس طرح کی حرکت کرتے ہوئے زیادہ پائے جاتے ہیں کہ جس سے گاڑیوں کو باہر نکالنے میں بہت پریشانی کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ غلط پارکنگ کے باعث شروع ہونے والی “تو تو میں میں” کا انجام باقاعدہ ہاتھا پائی کی صورت میں نکلتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: غلط پارکنگ قانونی ہی نہیں اخلاقی طور پر بھی جرم ہے!

wrong parking

Traffic jam due to wrong parking

اس ضمن میں قانون نافذ کرنے والے اداروں کا کردار بھی انتہائی مایوس کن ہے۔ ٹریفک پولیس کی جانب سے لوگوں میں درست پارکنگ کے حوالے سے بہت کم آگہی دی گئی ہے اور یہی وجہ ہے کہ غلط پارکنگ کے مرتکب اکثر لوگ پکڑے جانے پر اپنی لاعلمی کو بطور بہانہ بناتے ہیں۔ پھر دوسری طرف نجی اور سرکاری اداروں کی جانب سے شہر میں جاری ترقیاتی منصوبوں میں بھی پارکنگ کے معاملہ سے صرف نظر برتنا بھی اہم مسئلہ ہے۔ حکومت کو چاہیے کہ گاڑیوں کی عام شاہراہوں پر غلط پارکنگ اور ان سے پیدا ہونے والے مسائل سے نمٹنے کے لیے پارکنگ پلازہ تعمیر کرے اور لوگوں کو انہیں استعمال کرنے کی طرف بھی راغب کرے۔

Car parked wrongly

پاکستان میں گاڑیوں کی فروخت میں تیزی سے ظاہر ہوتا ہے کہ آنے والے سالوں میں آج سے دگنی گاڑیاں سڑکوں پر ہوں گی۔ حکومت اور متعلقہ اداروں کو چاہیے کہ وہ اس صورتحال سے نمٹنے کی پیشگی تیاری کریں۔ بالخصوص ٹریفک پولیس کو اپنے محکموں کو مضبوط بنانے اور ٹریفک قوانین پر سختی سے عملدرآمد کے قابل بنانے پر بھی توجہ دینے کی ضرورت ہے تاکہ غلط پارکنگ جیسی غیر قانونی حرکات سے پیدا ہونے والے مسائل سے چھٹکارہ حاصل کیا جاسکے۔

  • Shahid Mehmood

    you are absolutely right, i have seen many bikers who just parked their bikes in hurry on roads, or infront of shops . they can park it to extreme left but they just leave too much gap from the road left side. there should be a regulation from the Government that there should be a sufficient space for parking in every mall / plaza and this rule should be implemented even for a single shop level.

Top