پاکستان میں ای-چالان کیسے ادا کریں


ٹریفک مینجمنٹ کو بغیر کسی انسانی مداخلت کے بہتر بنانے اور کرپشن سے نمٹنے کے لیے پنجاب سیف سٹیز اتھارٹیز (PSCA) نے گزشتہ سال ستمبر 2018ء میں لاہور میں ای-چالان سسٹم متعارف کروایا۔

ٹریفک کی خلاف ورزی کرنے والوں کو پہچاننے کے لیے شہر بھر میں نصب شدہ ANPR کیمروں کو استعمال کیا جا رہا ہے۔ ان کی شناخت کے عمل کے بعد ای-چالان خلاف ورزی کرنے والوں کو ان کے گھروں کے پتوں پر ارسال کردیے جاتے ہیں۔

ان الیکٹرانک ٹکٹس کو دن کے اہم وقت میں طویل قطاروں میں کھڑے ہوکر جمع کروانے کے بجائے انٹرنیٹ سے بذریعہ آن لائن بینکنگ ادا کرنے کی اضافی سہولت دی گئی ہے۔

یہ بلاشبہ اتھارٹی کا اہم قدم ہے کہ ای-ٹکٹنگ کے عمل کو کرپشن سے پاک اور لاہور کے عوام کے لیے آسان بنایا۔ اتھارٹی یہی سسٹم پنجاب کے دیگر شہروں میں نافذ کرنے کے لیے بھی روز و شب کام کر رہی ہے۔

اس سسٹم کو شہر میں نافذ ہوئے کافی وقت گزر چکا ہے، لیکن اب بھی کئی لوگ سوشل ویب سائٹس پر یہ تبصرے کرتے دیکھے گئے ہیں کہ ای-چالان کو آن لائن کیسے چیک کریں اور اس کی آن لائن ادائیگی کیسے ممکن ہے۔ اس بلاگ میں ہم آپ کو مرحلہ وار طریقہ کار کے بارے میں بتائیں گے کہ یہ دونوں کام کیسے باآسانی کیے جا سکتے ہیں؟

ای-چالان کو آن لائن کیسے چیک کریں؟

کوئی بھی echallan.psca.gop.pk پر وزٹ کرکے اپنی گاڑی پر جاری ہونے والے ای-چالان چیک کر سکتا ہے۔

CNIC اور گاڑی کا رجسٹریشن نمبر داخل کریں، یہ آپ کو ای-چالان کا اسٹیٹس ظاہر کردے گا۔

آپ ای-چالان کو ڈاؤنلوڈ اور پرنٹ بھی کر سکتے ہیں۔

لاہور میں ای-چالان کیسے ادا کریں؟

اگر اتھارٹی نے چالان آپ کے گھر پر بھیجا ہےتو بینک آف پنجاب اور نیشنل بینک آف پاکستان کی قریبی ترین شاخ میں جائیں اور جرمانہ ادا کردیں۔

آپ ای-چالان بینک آف پنجاب کے ATMs کے ذریعے بھی ادا کر سکتے ہیں۔ طویل قطاروں میں لگنے کی ضرورت نہیں، صرف قریبی شاخ پر جائیں اور اپنا جرمانہ ATM کے ذریعے ادا کردیں۔

اگر آپ کو ایک ای-چالان جاری کیا گیا، لیکن یہ آپ کے گھر نہیں پہنچا یا گم ہو گیا تو آپ اتھارٹی کی ویب سائٹ سے ڈاؤنلوڈ کرکے اس کا پرنٹ لے کر بھی جمع کروا سکتے ہیں۔

واضح رہے کہ اس وقت ای-چالان کی آن لائن ادائیگی کےلیے ایک اینڈرائیڈ موبائل ایپلی کیشن بھی زیر تکمیل ہے۔

یہ ایپلی کیشن جلد ہی پنجاب سیف سٹیز اتھارٹی کی جانب سے جلد ہی جاری کی جائے گی جو شہریوں کو بہت سہولت دے گی۔ ایک مرتبہ یہ ایپلی کیشن لانچ ہو جائے تو یہ پلے اسٹور پر دستیاب ہوگی اور اسے باآسانی اپنے اسمارٹ فون پر ڈاؤنلوڈ کیا جا سکے گا۔

یہ ایپلی کیشن عوام کو اپنے CNIC اور گاڑی کے رجسٹریشن نمبر کے ذریعے اپنے خلاف جاری ہونے والے چالان کسی بھی وقت باآسانی چیک کرنے کی سہولت دے گی۔

مزید برآں، عوام کسی بھی باقی رہ جانے والے ای-چالان کی موجودہ صورتحال کو جاننے اور اسے BOP موبائل بینکنگ کے ذریعے ادا کرنے سے صرف ایک کلک دور ہوں گے۔

ہماری طرف سے اتنا ہی، اگر ای-چالان کی آن لائن ادائیگی یا چیکنگ کے بارے میں پالیسی میں کوئی تبدیلی آتی ہے تم ہم آپ کو آگاہ کریں گے، تب تک PakWheels.com پر آتے رہیے۔


My name is M. Ali Laghari and I love to read and write about Cars.

Top