یوم آزادی کا تحفہ: وزیر اعظم نے پی آئی اے کی پریمیئر سروس کا افتتاح کردیا

PIA-PREMIERE

پاکستان انٹرنیشنل ایئر لائنز (پی آئی اے)‎ کی جانب سے کارکردگی اور ساکھ بہتر بنانے کے لیے مختلف اقدامات اٹھائے جارہے ہیں۔ اسی ضمن میں گذشتہ ماہ پی آئی اے کی جانب سے ایک نئی پریمیئر سروس کے آغاز کا بھی عندیہ دیا گیا تھا۔ اور اب پاکستان کی 70ویں یوم آزادی کے موقع پر وزیر اعظم نواز شریف نے اس سروس کا باقاعدہ افتتاح کردیا ہے۔ پی آئی اے کو امید ہے کہ اس نئی سروس کے ذریعے وہ اپنے صارفین کا اعتماد جیتنے میں کامیاب ہوسکے گی جو اسے مستقبل میں اعلیٰ اور پیشہ وارانہ ایئرلائنز ثابت کرنے کے لیے اہم ثابت ہوگا۔

PIA-premier-service-(6)

پی آئی اے پریمیئر سروس کی افتتاحی تقریب اسلام آباد کے بینظیر بین الاقوامی ہوائی اڈے پر منعقد ہوئی۔تقریب کے دوران وزیر اعظم نواز شریف نے پی آئی اے پریمیئر کی پہلی پرواز PK-785 کے مسافروں کو الوداع بھی کیا۔ پی آئی اے پریمیئر کی یہ پہلی پرواز اسلام آباد سے لندن کے لیے روانہ ہوئی۔

اس موقع پر پی آئی اے کے چیف ایگزیکٹو آفیسر نے وزیر اعظم نواز شریف کو بتایا کہ نئی سروس شروع کرنے کا مقصد قومی ادارے کی معاشی صورتحال میں بہتری کی جانب قدم بڑھانا ہے۔ انہوں نے پریمیئر سروس کو مستقبل کی ایک جھلک قرار دیتے ہوئے کہ مہمان نواز عملے، بہترین کھانے اور اعلیٰ خدمات کے ذریعے دنیا کی بڑے اداروں میں پی آئی اے کا نام شامل کرنے کی امید ظاہر کی۔ پی آئی اے کی نئی سروس کے عملے کے روایتی لباس میں بھی بہتری لائی گئی ہے۔

یہ بھی پڑھیں: پاکستانی گاڑی بنانے کا موقع حکومتی غفلت کے باعث ضایع ہوگیا

PIA-premier-service-(4)

ایک زمانے میں دیگر ممالک کو ہوا بازی کی خدمات اور تربیت فراہم کرنے والے ادارے پاکستان انٹرنیشنل ایئرلائنز (پی آئی اے) کی موجودہ حالت کا اس بات سے بخوبی لگایا جاسکتا ہے کہ نئی سروس شروع کرنے کے لیے انہیں پڑوسی ملک سری لنکا کی قومی ایئرلائن سے مدد حاصل کرنا پڑی ہے۔ افتتاحی تقریب میں بھی سری لنکا کے وفد کو دعوت دی گئی جس میں سرکاری عہدیدارات سمیت قومی ایئرلائن کے نمائندے بھی شامل تھے۔ پی آئی اے نے سری لنکن ایئرلائن سے تین A-330 ہوائی جہاز لیے ہیں۔ اس موقع پر سری لنکن ایئر لائنز کے چیئرپرسن اجیت دیاس نے کہا کہ وہ اس منصوبے کا حصہ بننے پر فخر محسوس کرتا ہے۔ انہوں نے مزید بتایا کہ سری لنکن ایئر لائنز کا عملہ تین ماہ تک پی آئی اے پریمیئر پائلٹ اور دیگر عملے کو تربیت بھی فراہم کرے گے۔

فی الحال پی آئی اے کی نئی پریمیئر سروس ہفتے میں تین بار لاہور اور لندن جبکہ تین ہی بار اسلام آباد اور لندن کے درمیان سفر کرے گی۔ یہ بات تو آنے والا وقت ہی بتائے گا کہ پی آئی اے کی یہ کوششیں کس قدر بارآور ثابت ہوتی ہیں تاہم ایک ایسے موقع پر نئی سروس کا آغاز قابل تحسین ہے کہ جب قومی ادارہ شدید مالی مشکلات کا شکار ہے۔

PIA-premier-service-(3)

PIA-premier-service-(1) PIA-premier-service-(5)

Top