کوریائی گاڑی سانگ‌ یانگ تیوُولی کی پاکستان میں جانچ شروع

test-featured

پاک ویلز بلاگ کے مستقل قارئین کو بخوبی یاد ہوگا کہ اب سے تقریباً ایک ماہ قبل ہم نے دیوان فاروق موٹرز کی جانب سے گاڑیوں کے شعبے میں واپسی سے متعلق خبر دی تھی۔ اس وقت بہت کم لوگ یہ بات جانتے تھے کہ طویل عرصے پہلے گاڑیوں کی تیاری بند کردینے والا ادارہ ایک بار پھر اپنے کارخانوں کو دوبارہ کھولنے کی تیاری کر رہا ہے۔ مذکورہ خبر کے ساتھ ہم نے قارئین کو یہ بھی بتایا تھا کہ دیوان فاروق موٹرز نے سرمایہ کاری بورڈ (BOI) اور انجینئرنگ ڈیولپمنٹ بورڈ (EDB) کے عہدیداران سے ملاقات میں دیھان، سانگ یانگ اور کِیا موٹرز کی گاڑیاں پاکستان میں تیار اور فروخت کرنے میں دلچسپی ظاہر کی ہے۔

مزید پڑھیں: دیوان فاروق موٹرز واپسی کے لیے کوشاں؛ جلد آمد کے امکانات روشن!

اب تقریباً 40 سے زائد روز گزرجانے کے بعد ہمیں اس خبر کی عملی تعبیر بھی نظر آنا شروع ہوچکی ہے۔ پاک ویلز کمیونٹی کے ایک رکن نے کراچی میں جنوبی کوریا سے تعلق رکھنے والے کار ساز ادارے سانگ یانگ موٹر کمپنی کی ایک گاڑی کی نشاندہی کی ہے جس پر شناخت چھپانے کے لیے مختلف پٹیوں کا سہارا لیا گیا ہے۔ اس سے ظاہر ہوتا ہے کہ سانگ یانگ کی یہ گاڑی دراصل آزمائشی سفر کر رہی ہے جو عموماً گاڑیوں کی پیشکش سے قبل کی جانے والی جانچ کا اہم ترین حصہ ہوتا ہے۔

Tivoli Mule Shots

SsangYong Tivoli Leaked in Pakistan

تصویر میں نظر آنے والی گاڑی سانگ یانگ تیوُولی ہے۔ گزشتہ سال 2015 میں پیش کی جانے والی اس چھوٹی کراس اوور کو سانگ یانگ کی جدید ترین گاڑیوں میں شمار کیا جاتا ہے۔ گو کہ یہ گاڑی سانگ یانگ کے جنوبی کوریا میں موجود کارخانے ہی میں تیار کی جاتی رہی ہے تاہم دیوان فاروق موٹرز کی سنجیدگی اور پنچ سالہ آٹو پالیسی میں حاصل مراعات دیکھتے ہوئے سانگ یانگ تیوُولی کی پاکستانی کارخانوں میں تیاری کے امکانات کو رد نہیں کیا جاسکتا۔ دیگر ممالک میں دستیاب تیوُولی 1600cc پیٹرول یا ڈیزل انجن کے ساتھ پیش کی جاتی ہے جس کے ساتھ 6-اسپیڈ مینوئل یا 6-اسپیڈ AISIN آٹو میٹک ٹرانسمیشن منسلک کیا جاتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: نسان ڈاٹسن گو اور گو+ کی پاکستان میں خفیہ جانچ؛ تصاویر منظر عام پر آگئیں

Tivoli Ssangyong Rear

اس سے قبل سانگ یانگ کی گاڑیاں گندھارا انڈسٹریز لمیٹڈ کے توسط سے پاکستان میں پیش کی جاتی رہی ہیں تاہم ریکسٹون اور اسٹیوک جیسی گاڑیاں کوئی متاثر کن کامیابی حاصل نہیں کرسکیں۔ ماضی میں سانگ یانگ کی ناکامی کو دیکھتے ہوئے ذہن میں سوال اٹھتا ہے کہ کیا یہی ادارہ ایک نئے شراکت دار کے ساتھ کوئی قابل ذکر کارنامہ انجام دے سکے گا؟ اس کا جواب تو صرف آنے والا وقت ہی دے سکتا ہے۔

اگر دیوان فاروق موٹرز سانگ یانگ تیوولی کو لگ بھگ 20 لاکھ روپے میں پیش کر دے تو پھر یہ گاڑی مارکیٹ میں دستیاب دیگر گاڑیوں کو سخت ٹکر دے سکتی ہے۔ آپ اس بارے میں کیا رائے رکھتے ہیں؟ اپنی رائے کا اظہار بذریعہ تبصرہ ضرور کریں۔

Tivoli Front

Adan Ali

Adan is a Tribe Leader at Drive Tribe, who writes to share his passion for cars, culture and gadgetry through words. So far his writings and contributions have been able to make their way to media outlets like PakWheels and Dawn. Reach out to him by tweeting @adanali12

  • mar222184

    Things have changed a lot now as Pakistanis are so much fed up of old technology and high prices from old car mafia and hungry for quality new cars that they would embrace any manufacturer as long as they provide value for money. Its been hardly 3/4 years since i hav seen faw v2 launched in my city Sargodha and i can see an increasing amount of v2 already on the roads of sargodha.

  • ?

    We also need to literate our people with new diversified range of products that provides better value for money…. I still see people going crazy over bikes like CG-125 with new stickers each year… This is what explain a lot about our market standing from an investor’s point of view however, only way to break these monopolies is by bringing in new marketing techniques where you allow hands on product and let them experience vehicle on some tracks, so that they build their own perception.. We really need bikes like KTM duke-125 with tracks to let potential customer feel product to change CG mentality and move customers towards present.. Unfortunately we lack any of these in marketing..

  • Syed iqbal ahmed

    That’s good news Korean cars and suv again introduce in Pakistan , But Devan Farooq motors need a introduce lattes model cars and jeeps,

Top