سوزوکی مہران VX کی یاد نہیں آئے گی!

mehran-featured

بڑی خبر یہ ہے کہ سوزوکی پاکستان رواں سال کے اختتام تک مہران کا VX ویریئنٹ بنانا بند کر دے گا۔ ایمانداری کی بات یہ ہے کہ یہ اتنی بڑی خبر نہیں ہے لیکن اس کے باوجود ایک خبر ضرور ہے۔ سب جانتے ہیں کہ مہران کتنی پرانی ہے؛ یہ تقریباً تین دہائیوں سے میدان میں موجود ہے۔ اپنی پوری زندگی میں مہران کے مختلف ویریئنٹس سامنے آئے۔ VX، VXR اور VXL اس کی حالیہ پیشرفت ہیں۔ اور اس حال کا مطلب ہے 2000ء کے بعد۔ وہی وقت جب مقامی سطح پر بننے والی سوزوکی آلٹو کے بھی ایسے ہی نام تھے جبکہ بلینو بھی GL، GLi، GLiP وغیرہ کے بعد JXR اور JXL ویریئنٹس میں جاری کی گئی تھی۔

اس پورے عرصے میں مہران لگ بھگ وہی رہی۔ بلاشبہ لوکلائزیشن بڑھ گئی، سوائے انجن، ٹرانسمیشن اور چند دیگر چیزوں کے تقریباً سب کچھ مقامی سطح پر بننے لگا۔ لیکن بمپر، سامنے کی گرل کے ڈیزائنوں اور نشستوں کے کپڑے وغیرہ میں معمولی تبدیلیوں کے علاوہ فارمولا بنیادی طور پر وہی رہا۔ مہران کی مجموعی زندگی کو دیکھیں تو EFI انجن  ایک حالیہ تبدیلی ہے۔

Cheapest Car in Pakistan

suzuki-mehran-vxr-euro-ii-2013-12064890

VX مہران کا بنیادی ماڈل ہے۔ چند اضافی خصوصیات جو VXR میں شامل ہیں جیسا کہ ایئرکنڈیشننگ یونٹ اور گاڑی کے رنگ جیسے بمپرز، مجھے VX کو بنیادی ماڈل کہنے کی کوئی وجہ نظر نہیں آتی۔ سوزوکی مہران کا پورا تصور ہی میرے لیے “بنیادی ماڈل” جیسا ہے جسے سالوں پہلے ختم کر دینا چاہیے تھا۔ مہران VX اور VXR کے درمیان یہ فرق ہے:

فیچرز مہران VX مہران VXR
ایئرکنڈیشنر جی نہیں جی ہاں
پارٹ فیبرک ڈور ٹرم جی نہیں جی ہاں
اگلا اور پچھلا بمپر رنگین جی نہیں جی ہاں
باڈی سائیڈ مولڈنگ جی نہیں جی ہاں
اگلی اور پچھلی نشستوں کا مٹیریل Vinyl Fabric


ذاتی طور پر میرے خیال میں سوزکی پاکستان اپنی قدیم ہیچ بیک کو مکمل طور پر ترک کرنے کے لیے قدم بڑھا رہا ہے اور یہ اس سلسلے کا پہلا قدم ہے۔ سوزوکی آلٹو کی تصاویر ہمیں دکھا چکا ہے جو چند سال قبل ظاہر ہوئی تھیں۔ تو ہو سکتا ہے کہ پاک سوزوکی آہستہ آہستہ مہران کو پیچھے چھوڑتے ہوئے ایک نئی چھوٹی ہیچ بیک کی طرف بڑھ رہا ہو۔ لیکن ہو سکتا ہے میری رائے مکمل طور پر غلط ہو اور ایسا کچھ نہ ہونے جا رہا ہو۔پاک سوزوکی نے مہران سے پیچھا چھڑانے کا فیصلہ کیوں کیا، اس پر مختلف نظریات ہیں۔

Ahsan-Iqbal-Pak-Suzuki-Alto-3

Ahsan-Iqbal-Pak-Suzuki-Alto-2

ایک اور وجہ کہ سوزوکی ایسا کیوں کر رہا ہے، یہ کہا جا رہا ہے کہ EFI مہران کے اجراء کے بعد سے لوگ مہران کے بنیادی VX ماڈل کے بجائے ایئر کنڈیشنڈ ویریئنٹ (VXR) خریدنے کو ترجیح دے رہے ہیں۔ اس سے قبل مہران ایئر کنڈیشنر پر مسائل کا سامنا کرتی تھی لیکن EFI نے اس مسئلے کو بڑی حد تک حل کردیا۔ سادہ الفاظ میں VX کے مقابلے میں  VXR ایک بہتر آپشن بن گیا، اور VX کی اتنی طلب باقی نہیں رہی کہ ادارہ اسے برقرار رکھے۔

Suzuki Mehran Euro 2

اور آخری بات، جب سے یونائیٹڈ براوو حقیقت کا روپ دھار رہی ہے، ہو سکتا ہے کہ سوزوکی پاکستان نے محسوس کر لیا ہو کہ براوو کے شورومز تک پہنچنے کے بعد مہران VX جیسی گاڑی کی موجودگی کی کوئی تک نہ بنے۔

dahe-linup

لیکن جو بھی وجہ ہو، میرا نہیں خیال کہ رواں سال کے اختتام تک کوئی بھی سوزوکی مہران VX کی کمی کو محسوس کرے گا۔


Writing about cars and stuff.

Top