ٹویوٹا انڈس نے مزید گاڑیوں کی بُکنگ منسوخ کردیں

Toyota Corolla 2017

گاڑیوں کی فراہمی میں تاخیر جیسی مصیبتوں نے صارفین کو کئی سالوں سے پریشان کر رکھا ہے۔ لوگوں کو 3 ماہ سے لے کر 6 سے 7 مہینوں جیسے طویل وقت انتظار کرنا پڑتا ہے تب کہیں جاکر انہیں نت نئی گاڑیاں ملتی ہیں۔

اس کے خاتمے کے لیے ٹویوٹا انڈس نے سخت اقدامات اٹھا لیے ہیں۔ ادارے نے ایک پبلک نوٹس جاری کیا ہے جو بیان کرتا ہے کہ ادارے نے ان افراد کے لیے مزید بکنگ آرڈرز منسوخ کردیے ہیں جو معاہدے کے مطابق نہیں یا جو گاڑیاں ممکنہ سرمایہ کاروں کی جانب سے بک کی گئی تھیں۔

تفصیلات کے مطابق ادارے نے پروویژنل بکنگ آرڈرز (PBO) کا جامع جائزہ لیا ہے اور معلومات کی تصدیق کرتے ہوئے ان بکنگز کو منسوخ کردیا ہے جو گاڑیوں کو آن منی (پریمیئم) پر بیچنا چاہ رہے تھے۔ ان افراد کو اپنی ادائیگی واپس کردی جائے گی۔

یہ ٹویوٹا انڈس کا ایک بہت بڑا قدم ہے جو حقیقی ٹویوٹا صارفین کو سہولت دے گا اور مقامی مارکیٹ میں کئی فروخت کنندگان کی جانب سے بھاری آن منی کے عذاب سے چھٹکارا دلانے میں بالآخر ایک اہم قدم ہوگا۔ ٹویوٹا نے نومبر 2017ء میں 1300 سے زیادہ بک کی گئی کاروں کو بھی منسوخ کیا تھا، ہمارے خیال میں یہ قدم دیگر مینوفیکچررز کی بھی حوصلہ افزائی کرے گا، لیکن کسی نے بھی اس کی پیروی نہیں کی۔

NOTICE-FOR-REFUND 6

یہ امر قابل ذکر ہے کہ ادارے نے یہ بھی اعلان کیا ہے کہ اگر فیصلے میں کوئی بھی غلطی ہے تو فرد 29 مارچ 2018ء سے قبل رابطہ کر سکتا ہے تاکہ اپنے آرڈر کو درست کرے جو شیڈول کے مطابق فراہم کیا جائے گا۔ IMC نے صارفین پر زور دیا کہ وہ صرف منظور شدہ 3S ٹویوٹا ڈیلرشپس کے ذریعے ہی گاڑیوں کا آرڈر دیں اور کوئی بھی پریمیئم ادا کرنے پر رضامند نہ ہوں۔

اس وقت 248 بکنگز منسوخ کی گئی ہیں:

اس بارے میں اپنی رائے نیچے تبصرے میں دیجیے۔


I am an avid automotive enthusiast and like to write about cars and motorcycles.

Top