ٹویوٹا گاڑیوں میں نئے مسئلہ کا انکشاف؛ پاکستان درآمد شدہ پرایوس بھی متاثر ہوسکتی ہیں

toyota prius wallpaper

ٹویوٹا نے گاڑیوں میں دھویں کے اخراج کے انتظام میں ممکنہ مسائل کی وجہ سے تقریباً 28.7 لاکھ گاڑیوں کو طلب کرلیا ہے۔یہ خبر ایک ایسے وقت میں سامنے آئی ہے کہ جب ٹویوٹا کی جانب سے 14.3 لاکھ گاڑیوں میں ایئر بیگز کی خرابی دور کرنے کا اعلان کیے صرف ایک روز گزرا تھا۔ ٹاکاٹا ایئر بیگ ریکال کے نام سے جاری یہ مہم گزشتہ ماہ سے جاری تھی اور اس دوران تقریباً تین ہزار سے زائد نئی 2015 ٹویوٹا یارس (Yaris) میں شامل ایئر بیگز کی خرابیاں بھی دور کی گئیں۔

یہ بھی پڑھیں: لاکھوں ٹویوٹا کرولا اور ہونڈا سِوک کے حفاظتی ایئربیگز میں مسئلہ کا انکشاف

اب ایک نئے ممکنہ مسئلے کے پیش نظر ٹویوٹا نے ایک بار پھر ‘ریکال’ جاری کیا ہے۔ اس بار جن گاڑیوں میں مسئلے کی نشاندہی ہوئی ہے ان میں ٹویوٹا پرایوس، آوریس اور کرولا (Corolla) شامل ہیں جنہیں سال 2006 سے 2015 کے دوران تیار و فروخت کیا گیا تھا۔ ایندھن کے اخراج کے انتظام میں خرابی کی وجہ سے گاڑی میں لیکیج کی شکایت ہوسکتی ہے۔ فی الحال یہ کہنا ممکن نہیں کہ اس نئے ریکال کے عالمی سطح پر کیا اثرات مرتب ہوں گے۔ تاہم یہ بات یقین سے کہی جاسکتی ہے کہ جاپان سے پاکستان درآمد کی جانے والی پرایوس میں اس مسئلے کی موجودگی کا بہت زیادہ امکان ہے۔

یاد رہے کہ ٹویوٹا (Toyota) دنیا بھر میں موجود اپنے تین کارخانوں میں ٹویوٹا پرایوس تیار کر رہا ہے۔ ان تین میں سے دو کارخانے جاپان ہی میں موجود ہیں جہاں جنوبی ایشیا، یورپ اور امریکی منڈیوں کے لیے گاڑیاں تیار کی جاتی ہیں۔ اب چونکہ امریکا میں فروخت کی جانے والی پرایوس میں مسئلہ کا انکشاف ہوا ہے تو پاکستان میں دستیاب پرایوس کے متاثر ہونے کے امکانات بھی بڑھ گئے ہیں۔

Adan Ali

Adan is a Tribe Leader at Drive Tribe, who writes to share his passion for cars, culture and gadgetry through words. So far his writings and contributions have been able to make their way to media outlets like PakWheels and Dawn. Reach out to him by tweeting @adanali12

Top