زیمکو کروز 200 – ٹیسٹ رائیڈ اور پہلے تاثرات

img-20170511-wa0000

زیمکو نے جنوری 2017 میں ایک 200cc سپورٹس بائیک لانچ کی۔ اپنی شدید دلچسپی کی وجہ سے میں نے پاک وہیلز کے قارئین کےلیے اس بائیک کی ٹیسٹ رائیڈ لینے کا فیصلہ کیا۔ اس مقصد کے لیے میں نے لاہور میں زرار شہید روڈ پر موجود افضال ٹریڈرز کا دورہ کیا۔ بائیکس کے ساتھ گہری دلچسپی ہونے کی وجہ سے میں اس سفر کے لیے بہت پرجوش تھا۔ اس ٹیسٹ رائیڈ کا مقصد اس بائیک کی کارکردگی، بناوٹ اور کوالٹی کا جائزہ لینا تھا کیونکہ کمپنی نے اس بائیک کو اشتہارات میں بہت زیادہ پروموٹ کیا تھا۔ مزید کوئی اور بات کیے بغیر آئیے ہم اس موٹر بائیک کے متعلق میرے مشہادات کی طرف آتے ہیں۔

بیرونی بناوٹ اور کوالٹی:

img-20170511-wa0000

img-20170511-wa0002

img-20170511-wa0009

img-20170511-wa0003

img-20170511-wa0004

img-20170511-wa0005

img-20170511-wa0008

img-20170511-wa0011

img-20170511-wa0010

اپنی بھاری باڈی کی بناوٹ اور گرے کلر کی وجہ سے یہ بائیک یاماہا کی ہیوی بائیکس سے ملتی جلتی ہے مگر یہ مماثلت یہاں تک ہی محدود ہے۔ یہ ایک غصیلی دکھاوٹ اور انتہائی نیچے کی جانب جھکے ہوئے ڈیزائن کا حسین امتزاج ہے۔ تاہم جب آپ اس بائیک کو قریب سے دیکھتے ہیں تو چیزیں بہت مختلف نظر آتی ہیں۔

سب سے پہلی چیز جو میں نے نوٹس کی وہ اس کے فیول ٹینک پہ ہونے والا غیر معیاری پینٹ تھا جبکہ آپ سب اس بات سے اتفاق کریں گے کہ فیول ٹینک بائیک کی دکھاوٹ میں کلیدی کردار ادا کرتا ہے۔ اس کا انفارمیشن کلسٹر پلاسٹک کا بنا ہوا ہے جو دیکھنے میں تو بہت اچھا لگتا ہے مگر اس کی عمر زیادہ لمبی نہیں ہوتی۔

اس کے سپیڈ اور لائٹ انڈیکیٹر انتہائی نفاست کے ساتھ آسانی سے سمجھ آجانے والی ترتیب میں لگائے گئے ہیں مگر اس کے لیے ضروری ہے کہ آپ دن کی روشنی میں اسے دیکھیں۔ بہرحال اگر آُپ شام کے وقت اس بائیک کو باہر لے جائیں تو آپ یہ دیکھیں گے کہ اس کے انفارمیشن کلسٹر میں ایک ڈیجیٹل سپیڈو میٹر نصب ہے جو کہ سفر کا فاصلہ، فیول سیل، اور وقت کو ناپتا ہے۔

مزید یہ کہ اس بائیک میں ایک پچھلا ایڈجسٹیبل مونو شاک، لو بیم ڈپر بٹن، اگلی اور پچھلی ڈسک بریک، اگلا ایگل شیپ پروجیکشن لیمپ، پچھلے بریک لیمپ میں ایل ای ڈی لائٹ، اور ٹون ایئر ڈکٹ جو اس کے انجن کو ہوا فراہم کرتی ہیں شامل ہیں۔

انجن کی کارکردگی:

جہاں تک انجن کا تعلق ہے تو اس بائیک میں ایک 200cc پانی سے ٹھنڈا ہونے والا سنگل سلینڈر 4 سٹروک انجن نصب ہے۔ میں اس بائیک کے انجن کی کارکردگی سے زیادہ متاثر نہیں ہوا۔ پہلی بات یہ ہے کہ اس کا انجن سیلف سٹارٹ بٹن سے فوری طور پر سٹارٹ نہیں ہوتا بلکہ اسے کئی بار آزمانا پڑتا ہے۔ اور دوسری بات یہ کہ کھڑی حالت میں اس بائیک کے انجن میں پاور کی بہت زیادہ کمی ہے۔ میں نے کھڑی حالت میں دوسرا گیئر ڈال کر اسے چلانے کی کوشش کی تو مجھے ایسا محسوس ہوا جیسے اس کا انجن کیچڑ سے بند ہوا ہے۔ تاہم نارمل طریقے سے گیئر لگانے پر یہ بائیک عمدہ ایکسلریشن فراہم کرتی ہے۔ تاہم بہت زیادہ ایکسلریشن دینے پر بائیک میں بہت زیادہ کمپن اور عجیب آوازیں سنائی دیتی ہیں۔

آرام دہ:

یہ بات اس طرح سے سمجھ لیں کہ ایک ٹیسٹ رائیڈ لینے کے بعد مجھے اپنی کمر سیدھی کرنا پڑ گئی تھی۔ اس کا رائیڈ سٹائل انتہائی فضول ہے۔ اس کا بڑا فیول ٹینک، سیٹ پر کمزور پکڑ، اور انتہائی بری جگہ لگا ہوا فارک ہینڈل آپ کو ایک انتہائی ناخوشگوار رائیڈ فراہم کرتا ہے۔ اس کے فارک ہینڈل کی پوزیشن لمبے سفر میں بہت زیادہ تھکا دینے والی ہے جس سے کمر درد ہو سکتا ہے۔ اس کی پیسینجر سیٹ آرام دہ ہے مگر یہ ہیوی بائیکس کی طرح ڈیزائن نہیں کی گئی۔ سب سے اہم بات یہ ہے کہ اس کے بریک پیڈل سلینڈر شکل کے ہیں جس کی وجہ سے اس بائیک پر بریک لگانا بہت مشکل ہوجاتا ہے۔

قیمت:

زیمکو کروز 200 کی رجسٹریشن کے ساتھ قیمت لگ بھگ 265000 روپے ہے۔ اس قیمت کو مدنظر رکھتے ہوئے میں یہ کہوں گا کہ یہ ایک ناکام پروڈکٹ نہیں ہے مگر اس کا مقصد صرف دکھاوا ہے۔ بات کو سمیٹتے ہوئے میں یہ کہوں گا کہ زیمکو کروز ایک ہیوی بائیک نہیں ہے اور نہ ہی عام بائیک ہے۔ میرے پیارے قارئین یہ روائیتی سپورٹس بائیک کو انتہائی محدود بجٹ میں کاپی کرنے کی کوشش ہے۔ اگر آپ ایک عمدہ کارکردگی والی بائیک خریدنا چاہتے ہیں تو افسوس کہ یہ بائیک آپ کی امیدوں پر پورا نہیں اتر سکتی تاہم اگر آپ کو دکھاوے کے لیے ایک بائیک چاہیے تو زیمکو کروز وہ بائیک ہوسکتی ہے۔

Shaf Younus

I'm an Auto Enthusiast, a Student of Computer Science and above all, Citizen of Pakistan.

Top