وہ گاڑیاں جو کہ آپ پندرہ سے بیس لاکھ روپے کے اندر خرید سکتے ہیں۔

Toyota Corolla

اگر آپ پندہ سے بیس لاکھ روپے  کے اندر کوئی گاڑی خریدنے کی خواہش رکھتے ہیں تو پھر آپ نے صحیح جگہ کا انتخاب کیا ہے۔یہاں ہم کچھ مشہور ترین گاڑیوں کی ایک فہرست جاری کر رہے کہ جو کہ آپ پاکستان بھر میں پندرہ سے بیس لاکھ روپے کے اندر خرید سکتے ہیں۔

٭     ففتھ جنریشن ہنڈا سِٹی۔
honda-city_2008
             ففتھ جنریشن ہنڈا سِٹی کو 2009میں متعارف کروایا گیا،جس کا مطلب ہے کہ یہ پراڈکشن کے آٹھ کامیاب سال دیکھ چکی ہے۔ہنڈا سِٹی دو طرح کے انجنوں میں دستیا ب ہے ایک ون پوائنٹ تھری فور ان لائن اور دوسرا ون پوائنٹ فائیور فور ان لائن انجن جو کہ بالترتیب ایک سو اور ایک سو بیس بی ایچ پی دیتے ہیں۔ففتھ جنریشن ہنڈا سٹی کی صورت میں،آپ ایک خوبصورت سیڈان حاصل کرتے ہیں جو کہ ماڈرن ڈیزائن،مقابلتاً چھوٹی ایکسٹیریئر ڈائمینشنز،کشادہ انٹیریئر،کھلی بوٹ سپیس، کی حامل ایک قابلِ اعتماد سواری اور سب سے بڑھ کر یہ کہ ایک اچھی فیول اکانومی رکھتی ہے۔ہنڈا سِٹی کے مزید اعلیٰ (ایسپائر ماڈل) میں آپ الائے وہیلز،فرنٹ فوگ لائٹس اور سیٹلائٹ نیویگیشن حاصل کرتے ہیں،جبکہ بیس ماڈل میں آپ ایئر کنڈشننگ،پاور ونڈوز،پاور سٹیئرنگ،پاور لاکس،دو سپیکرز پر مشتمل سٹیریو آڈیو سسٹم،ٹرپ کمپیوٹر،کپ ہو لڈرز اور ٹیکنومیٹر حاصل کرتے ہیں۔آپ سِٹی کا بیس ماڈل ون پوائنٹ تھری ساڑھے سولہ لاکھ میں خرید سکتے ہیں جبکہ فلی لوڈڈون پوائنٹ تھری لیٹر ایسپائر بشمول آٹو میٹک ٹرانسمیشن آپ کو بیس لاکھ تک میں ملتا ہے۔
٭     تھرڈ جنریشن ٹویوٹا وِٹز۔
toyota_vitz_2010
              تھرڈجنریشن ٹویوٹا وِٹز 2010میں متعارف کروائی گئی،تھرڈ جنریشن ٹویوٹا وِٹز باالکل نئے اور ماڈرن ڈیزائن اپ ڈیٹ انٹیریئر اور جدید تحفظاتی خصوصیات کے ساتھ آتی ہے۔ٹویوٹا وٹِز انجن کی تین آپشنز کے ساتھ آتی ہیں جن میں تھری ان لائن ون پوائنٹ زیرو لیٹر،فور ان لائن ون پوائنٹ تھری لیٹر اور فور ان لائن ون پوائنٹ فائیو لیٹر شامل ہیں جو کہ بالترتیب،اکہتز،چوراسی اور ایک سو دس بی ایچ پی دیتے ہیں۔یہ تما م انجن فائیو سپیڈ مینویل ٹرانسمیشن کے ساتھ آتے ہیں جو کہ آٹو میٹک ٹرانسمیشن میں بھی دستیاب ہیں ان گاڑیوں کا انٹیریئر آگے اور پیچھے دونوں جگہ بیٹھنے والے افراد کو بہت ہی کھلا روم فراہم کرتا ہے اور یہ کھلا پن پیچھے والی نشستوں کو فولڈ کرنے پر مزید بڑھ جاتا ہے۔وِٹز اپنے انسٹرومنٹ کلسٹر میں بنیادی بیسِک ڈائلز رکھتی ہے جن میں سپیڈو میٹر،چھوٹے ڈسپلے پر مشتمل ٹرپ کمپیوٹر اور فیول گیج شامل ہیں۔مزید یہ ٹریکشن کنٹرول،مینویل ایئر کنڈشننگ،پاور ونڈوز،ایکٹرونکلی ریٹریکٹ ایبل پاور مِررز،متعدد کپ ہولڈرزاور ایک ٹچ سکرین انفوٹینمنٹ سسٹم کی حامل ہے۔ہائر اینڈ ماڈلز میں آپ جو خصوصیات پاتے ہیں ان میں ہیِٹڈ فرنٹ سیِٹس،کلائمیٹ کنٹرول اور کروز کنٹرول شامل ہیں۔ایک اعشاریہ سفرلیٹر تین سیلنڈرپر مشتمل تقریباً بیس ہزار کلو میٹر چلی ہو ئی ٹویوٹا وِٹز آپ کو ساڑھے پندرہ سے سولہ لاکھ روپے تک میں ملتی ہے۔
٭     فرسٹ جنریشن ٹویوٹا ایکواء۔
Toyota Aqua 1
              فرسٹ جنریشن ٹویوٹا ایکو اء کو 2012میں متعارف کروایا گیا،یہ دراصل ٹویوٹا پریئس کا کم طاقتور اور چھوٹا ورژن ہے۔اس کا شمار موجودہ دوور میں جاپان کی سب سے زیادہ فروخت ہونے
والی گاڑیوں میں بھی ہوتا ہے۔ٹویوٹا ایکواء کی شکل میں آ پ فرنٹ وہیل ڈرائیو کی حامل ایک نہائت ہی عمدہ ہائبرڈ گاڑی حاصل کرتے ہیں جو کہ ایک سو بی ایچ پی بناتی ہے،یہ الیکٹرک موٹر سے حاصل ہونے والے انسٹنٹ ٹارک کی بدولت بہترین ایکسلریشن دیتی ہے جو کہ عمدہ فیول اکانومی کا سبب بنتی ہے اور آپ کو کہیں بھی بیس سے پچیس کلو میٹر کی رینج دیتی ہے۔ایکواء اپنے اندر مزید قابلِ ذکر خصوصیات رکھتی ہے جن میں مکمل ڈیجیٹل ڈیش بورڈ،ایکو موڈ بٹن،ای وی بٹن جو کہ آپ کو صرف الیکٹرک پاور پر ڈرائیو کے قابل بناتا ہے،پش سٹارٹ اگنیشن،کروز کنٹرول،الیکٹرنکلی ریٹریکٹ ایبل پاور مِررز،چار سٹیریو سپیکرز اور ریورس کیمرہ پر مشتمل سات انچ کا ٹچ سکرین کا حامل انفوٹینمنٹ سسٹم۔متعدد کپ ہولڈرز،پاور ونڈوز اور ایمپل انٹیریئر سٹوریج سپیس۔آپ پچاس کلو میٹر سے کم چلی ہوئی ٹویوٹا ایکواء تقریباً سترہ سے اٹھارہ لاکھ تک میں خرید سکتے ہیں۔
٭     تھرڈ جنریشن ہنڈا فِٹ ہائبرڈ۔
Honda Fit 1
             تھرڈ جنریشن ہنڈا فِٹ ہائبرڈکو سب سے پہلے 2014میں متعارف کروایا گیا تھا۔ہنڈا فٹ ایک درمیانے سائز کی فرنٹ انجن رکھتی ہیچ بیک ہائبرڈ ہے جو کہ بعض ممالک میں ہنڈا جاز کے نام سے جانی جاتی ہے۔ہنڈا فِٹ ایک مناسب سائز کا ضرورت بھر انٹیریئر سپیس رکھتی ہے جو کہ آگے اور پیچھے بیٹھنے والے دونوں افراد کو کھلا ہیڈ روم، لیگ روم اور چوڑا بوٹ سپیس فراہم کرتی ہے۔ہنڈا فِٹ ایک نہائت ہی جار ہانہ ڈیزائن لینگویج اوربا رعب ڈیزائن کلیوز رکھتی ہے جو کہ مارکیٹ میں اپنی پہچان بنانے کے لئے ہیچ بیک کے سمند ر میں اسے نمائیاں بناتے ہیں۔ہنڈا فِٹ الیکٹرک موٹر سے جڑا ایک اعشاریہ پانچ لیٹر کا انجن رکھتی ہے جو کہ بہترین فیول ایوریج دیتا ہے اور آپ کو بیس سے پچبس کلو میٹر کی ایوریج فراہم کرتا ہے۔فِٹ ہائبرڈکی بنیادی سہولیت میں کلائمیٹ کنٹرول،کروز کنٹرول،کی لیس انٹری،ملٹی فنکشن سٹیئرنگ وہیل،پش سٹارٹ اگنیشن،پانچ انچ کی ٹچ سکرین انفو ٹینمنٹ سسٹم جو کہ ایک سو ساٹھ واٹ کے چار سٹیریو سپیکرز کے آڈیو سسٹم پر مشتمل ہے۔ایک معقول مائلیج چلی ہو ئی تھرڈ جنریشن ہنڈا فِٹ ہائبرڈآپ کو سترہ اٹھارہ یا بیس لاکھ روپے میں مل جاتی ہے۔
   ٭     الیونتھ جنریشن ٹویوٹا کرولا۔
toyota-corolla-altis-grande-2017-launched-feature-e1501829851384-640x360
              الیونتھ جنریشن ٹویوٹا کرولاکو جولائی 2014کو پاکستان میں متعارف کروایا گیا تھا،ٹویاٹا کرولا کا شمار پاکستان کی مشہورترین گاڑیوں میں ہوتا ہے۔ٹویوٹا کرولا کی الیونتھ جنریشن فیس لفٹ کو کچھ دن قبل ہی ٹویوٹا انڈس کی جانب سے متعاف کروایا گیا۔اس پرائیس رینج میں آپ ساڑھے سترہ لاکھ سے شروع ہونے والی کرولا ایکس ایل آئی کی نئی فیس لفٹ یا پھر انیس لاکھ سے شروع ہونے والی جی ایل آئی کی نئی فیس لفٹ حاصل کرسکتے ہیں۔ جیسا کہ نئی ٹویوٹا کرولا جی ایل آئی اور ایکس ایل آئی کی خصوصیات ابھی تک عام نہیں کی گئیں مگر ہم یقین سے کہہ سکتے ہیں کہ یہ،پاور ونڈوز،ایئر کنڈشننگ،نئے ٹرپ کمپیوٹراور اپ ڈیٹ انسٹرومنٹ کلسٹر کی حامل ہو گی۔اگر آپ الیونتھ جنریشن کرولا فیس لفٹ کے لئے لمبا انتظار نہیں کرنا چاہتے اور ایک استعمال شدہ کرولا کی تلاش میں ہیں تو آپ کو ون پوائنٹ سِکس کرولااٹلس تقریباً پچاس ہزار کلو میٹر چلی ہوئی بیس لاکھ روپے تک میں مل جاتی ہے۔
٭     نائنتھ جنریشن ہنڈا سوِک۔
photos_honda_civic_2012_2_1280x960
             نائنتھ جنریشن ہنڈا سوِک کو پاکستان میں اٹلس ہنڈا کی جانب سے ستمبر 2012 کو متعارف کروایا گیا۔نائنتھ جنریشن ہنڈا سوِک اپنی مدِ مقابل گاڑیوں کی نسبت زیادہ بہتر ڈیزائن کی حامل ہے اور ابھی 2016تک ہنڈا کی فلیگ شپ سواری ہے جب کہ ٹینتھ جنریشن ہنڈا سوِک بھی متعارف کروائی گئی ہے۔نائنتھ جنریشن ہنڈا سوِک میں آپ فائیو سپیڈ آٹو یا مینویل ٹرانسمیشن سے جڑا ایک اعشاریہ آٹھ لیٹر کا فور ان لائن انجن حاصل کر تے ہیں جو کہ ایک سو چوالیس بی ایچ پی بناتا ہے۔ایک اعشاریہ آٹھ لیٹر آئی وی ٹیک کی بنیادی خصوصیات میں ایئر کنڈشننگ،پاور ڈور مِررز،پاور ونڈوز،پاور لاک ڈورز بشمول چار سپیکرز والا سٹیریو آڈیو سسٹم شامل ہیں۔اسکا ہائیراینڈ ماڈل اوریئل اپنے ساتھ میں الائے وہیلز،فرنٹ فوگ لائٹس،لیدر اپ ہولسٹری او ر سن روف رکھتا ہے۔مزید آپشنزمیں سن روف،الیکٹرونکلی ریٹریکٹ ایبل ڈور مِررز،کروز کنٹرول،سیٹلائٹ نیویگیشن،آٹو میٹک کلائمیٹ کنٹرول اور لیدر اپ ہولسٹری شامل ہیں۔نائنتھ جنریشن ہنڈا سوِک ایک نہائت کھلا انٹیریئر رکھتی ہے جو کہ نہائت آرام دہ بھی ہے۔آپ ایک ساٹھ کلو میٹر چلی ہوئی نائنتھ جنریشن فلی لوڈِڈ اوریئل پراسمیٹک سوِک تقریباً بیس لاکھ روپے تک میں حاصل کر سکتے ہیں جبکہ کم خصوصیات کا حامل ماڈل انیس لاکھ میں حاصل کر سکتے ہیں۔
٭     ہنڈا سی آر زِی۔
Honda-CR-Z-FL-0
            یہاں ایک ایسی گاڑی ہے جس کے اس مضمون میں ذکر کی آپ توقع نہیں کر رہے ہوں گے مگر یہ ایسی گاڑی ہے جو کہ اسی پرائیس رینج میں لے کر آپ یہ دیکھ سکتے ہیں کہ ”ہائبرڈ سپورٹس کار“میں ہنڈا کی مارکیٹ کیسی ہے۔ہنڈا سی آر زِی کو ایک فرنٹ انجن اور فرنٹ وہیل ڈرائیو رکھتی سپورٹس گاڑی کی صورت میں 2010کو متعارف کروایا گیا۔اس کی ایکسٹیریئر ڈائمینسنز کافی چھوٹی ہیں مگر پھر بھی اس کی ڈیزائن لینگویج آج کل کی ماڈرن گاڑیوں سے میل کھاتی ہے۔یہ اپنے بونٹ میں ایک اعشاریہ پانچ لیٹر کا فور ان لائن انجن رکھتی ہے جو ہائبرڈ ڈرائیو ٹرین ہے اور ایک سو بیس بی ایچ پی بناتا ہے،یہ چھ سپیڈ مینو یل گیئر کے ساتھ آتی ہے اور سات سپیڈ کے سی وی ٹی آٹو میٹک ٹرانسمیشن بشمول پیڈل شفٹر کی اضافی آپشن کے ساتھ بھی آتی ہے۔ سی آر زی چھ ایئر بیگز ر،چار سپیکرز دو ٹویٹر سٹیریو سسٹم،کی لیس انٹری،کروز کنٹرول،آٹو میٹک کلائمیٹ کنٹرول،پاور ڈور مِررز،ملٹی انفارمیشن ڈسپلے اورملٹی فنکشن سٹیئرنگ وہیل رکھتی ہے۔آپ سیٹلائٹ نیویگیشن کی آپشن بھی اختیار کر سکتے ہیں۔آپ تقریباً ساٹھ ہزار کلو میٹر چلی ہو ئی سی آر زی ساڑھے سترہ لاکھ تک میں حاصل کر سکتے ہیں۔
٭     تھرڈ جنریشن ٹویوٹا پریئس۔
toyota-prius-s-touring-selection-gs-1-8-2013-6668509
             تھرڈ جنریشن ٹویوٹا پریئس کو 2009 میں متعارف کروایا گیا،پریئس ایک فرنٹ انجن اور فرنٹ وہیل ڈرائیوہائبرڈ ہیچ بیک ہے اور اس کا شمار مشہور ترین ہائبرڈ گاڑیوں میں ہوتا ہے،تھرڈ جنریشن ٹویوٹا پریئس کے تقریباً سترہ لاکھ یونٹس مینو فیکچرڈ کیئے جا چکے ہیں۔یہ گاڑی اپنے بونٹ میں ایک اعشاریہ آٹھ لیٹر کا فور سیلنڈرہائبرڈ انجن رکھتی ہے جو کہ ایک سو چونتیس بی ایچ پی دیتا ہے۔تھرڈ جنریشن پریئس اپنی مدِ مقابل گاڑیو ں میں لوئر ڈریگ کو ایفشنٹ رکھتی ہے جو کہ اسے اکنامیکل اور تیز رفتاری میں بھی متوازن رکھتا ہے۔نوے ہزار کلو میٹر چلی ہو ئی تھرڈ جنریشن پریئس آپ کو تقریباً ساڑھے اٹھارہ لاکھ میں ملتی ہے جبکہ ساٹھ ہزار کلو میٹر چلی ہو ئی گاڑی تقریباً بیس لاکھ تک میں آتی ہے۔

Top