ٹویوٹا سرف 1996 – ریویو ایک مالک کی نظر سے

0 3 829

پاک ویلرز کی بار بار ڈیمانڈ کے بعد ہم ٹویوٹا سرف 1996 ماڈل کے مالک کی نظر سے ریویو کے ساتھ حاضر ہیں۔ یہ گاڑی 1996 سے ‏2001-02 تک مینوفیکچرنگ میں رہی۔ کمپنی نے یہ 2001 میں اس ماڈل کا فیس لفٹ متعارف کروایا۔

کمپنی نے یہ ماڈل 1KZ ڈیزل انجن کے ساتھ پیش کیا کہ جن میں 2700cc 2TR اور 5VZ 3400cc شامل تھے۔ اس کےعلاوہ یہ گاڑی دو ویرینٹس رکھتی تھی، ایک SSRG اور دوسرا SSRX۔ جس کا ریویو کیا جا رہا ہے وہ SSRG ہے۔

سرف SSRG اور سرف SSRX میں فرق:

دونوں ویرنٹس میں بڑا فرق نرم/سخت سسپنشن کا ہے اور SSRG کے ریئر مرر گاڑی کے دوسرے ونڈوز مرر کی طرح کام کرتے ہیں۔

قیمت اور خریداری کا فیصلہ:

مالک نے یہ گاڑی 2018ء میں 22 لاکھ روپے میں خریدی تھی۔ خریداری کے فیصلے کے بارے مین بتاتے ہوئے مالک نے کہا کہ وہ ہمیشہ سے سرف خریدنا چاہتے تھے، کیونکہ انہیں یہ گاڑی پسند ہے۔انہوں نے کہا کہ «مجھے شروع میں یہ گاڑی نہیں مل پائی، تو میرے ذہن میں 80-سیریز اور پراڈو بھی تھی، لیکن ایک سال بعد مجھے یہ گاڑی مل گئی۔»

انجن:

یہ گاڑی 3400cc 5VZ پٹرول انجن رکھتی ہے۔ مالک نے پاک ویلز کو بتایا کہ «انجن پاکستان میں بہت نایاب ہیں کیونکہ زیادہ تر یہ گاڑی ڈیزل انجن کے ساتھ آتی ہے۔»

فیول ایوریج:

شہر کے اندر اس کا فیول ایوریج 6 سے 7 کلومیٹرز فی لیٹر ہے، جبکہ یہ لمبے روٹ پر تقریباً 8 کلومیٹرز فی لیٹر دیتی ہے۔

ڈرائیو کمفرٹ:

مالک کے مطابق اس کا ڈرائیو کمفرٹ بہت اچھا ہے۔ انہوں نے کہا کہ «گو کہ میں نے اصل شاکس تبدیل کروائے ہیں، لیکن اب بھی یہ ایک آرام دہ گاڑی ہے۔» انہوں نے مزید کہا کہ یہ گاڑی آف روڈ تجربے کے لیے زبردست ہے۔

اس کے علاوہ مالک نے کہا کہ اسٹاک سسپنشن پر گاڑی کی stability بہترین تھی؛ لیکن نئے شاکس کے بعد معمولی سی unbalancing ہے، جس نے اس کی اونچائی بڑھا دی ہے۔

پارٹس کی دستیابی:

مالک کا کہنا ہے کہ اس گاڑی کے باڈی اور انجن پارٹس دونوں لوکل مارکیٹ میں مناسب قیمت پر پہلے سے دستیاب ہیں۔

سیفٹی فیچرز:

یہ گاڑی ڈوئل ایئربیگز اور ABS بریکس رکھتی ہے، جو اسے کافی محفوظ گاڑی بناتے ہیں۔

معلوم خامیاں:

اس گاڑی میں معمولی خامیاں بھی ہیں جیسا کہ ریئر مرر کے موٹرز اور انٹینا ذرا جلدی گھس جاتے ہیں، آپ کو انہیں تبدیل کروانا پڑے گا۔

‏AC کی پرفارمنس:

مالک اس گاڑی کی AC پرفارمنس سے مکمل طور پر مطمئن ہیں۔

ڈیش بورڈ:

یہ گاڑی ٹیک کی لکڑی کا ڈیش بورڈ رکھتی ہے، جو اسے بہت خاص صورت دیتا ہے۔ اس کے علاوہ سینٹرل کونسول میں شاکس، ECT پاور اور ریئر مرر کے لیے بٹن موجود ہیں۔

سائز کا مسئلہ:

مالک کا کہنا ہے کہ انہیں اس کے سائز کی وجہ سے کسی بڑے مسئلے کا سامنا نہیں کرنا پڑا۔ انہوں نے کہا کہ «میں نے یہ گاڑی بہت تنگ جگہوں پر بھی چلائی ہے، خاص طور پر اگر اس کا مقابلہ پراڈو سے کریں تو۔»

سالانہ ٹوکن:

ٹویوٹا سرف کا سالانہ ٹوکن تقریباً 33,000 روپے ہے۔

آئل چینج پر لاگت:

مالک پر 6 سے 7 ہزار کلومیٹرز پر اس گاڑی کا آئل چینج کرواتے ہیں جو انہیں 7سے 8 ہزار روپے کا پڑتا ہے۔

بیٹھنے کی اور ڈِگی میں گنجائش:

شہر اور اندر اور لمبے روٹ پر بھی اس گاڑی میں پانچ لوگ آسانی سے بیٹھ سکتے ہیں۔ اس کے علاوہ اس میں سامان رکھنے کی کافی گنجائش موجود ہے۔

نتیجہ:

مالک کے مطابق اگر انہیں دوبارہ موقع ملے تب بھی یہ گاڑی ضرور خریدیں گے۔ انہوں نے کہا کہ «اگر آپ ان گاڑیوں پر 2 سے 3 لاکھ روپے خرچ کریں تو یہ زیرو میٹر گاڑیوں سے بھی اچھی ہو جاتی ہیں۔»

وڈیو دیکھیں:

Google App Store App Store

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.