گیئر آئل بروقت تبدیل کروائیں اور گاڑی کو بڑے نقصان سے بچائیں!

cutaway-view-of-a-transmission

عام طور پر دیکھا گیا ہے کہ گاڑیوں کے مالکان گیئر آئل (Gear Oil) کے معاملے بہت لاپرواہی کا مظاہرہ کرتے ہیں۔ گاڑی کو بغیر کسی مسئلے کے رواں دواں رکھنے کے لیے گیئر باکس کا ٹھیک ہونا بہت ضروری ہے۔ چاہے گاڑی آٹو ٹرانسمیشن کی حامل ہو یا مینوئل دونوں ہی صورتوں میں گیئر کا خیال رکھنا بالخصوص اس میں ڈلنے والے تیل کو بروقت تبدیل کرنا ازحد ضروری ہے۔ یہ کام اس وقت بھی زیادہ اہمیت اختیار کرجاتا ہے کہ جب آپ کو گیئر استعمال کرنے میں مشکلات پیش آرہی ہوں۔

اس حوالے سے ایک بات واضح کرتا چلوں کہ مینوئل، آٹو اور CVT ٹرانسمیشن کے لیے الگ الگ آئل آتے ہیں۔ میں نے کچھ لوگوں کو عام ATF (آٹو ٹرانسمیشن فلیوڈ)آئل کودرآمد شدہ وِٹز میں استعمال کرتے ہوئے دیکھا ہے جو درحقیقت CVT گیئر باکس کی حامل ہے۔ نتیجتاً وہ کچھ عرصے بعدان کی گاڑی مکینک کے پاس کھڑی نظر آتی ہے۔ اس کے علاوہ ‘چوہے کی شکل والی’ ہونڈا سِٹی (Honda City) ویریو میں بھی CVT گیئر باکس شامل ہوتا ہے۔ میرے ایک دوست نے بتایا کہ 2003 سِٹی ویریو کے گیئر باکس پر ATF لکھا ہوا ہے جبکہ حقیقت میں وہ CVT ہی تھا۔ بہرحال، یہ بات صرف سنی سنائی ہے اور مجھے اس کی تصدیق کا موقع نہیں مل سکا۔ اگر قارئین میں سے کسی کے پاس سِٹی ویریو ہے تو وہ ضروری اس کی تردید کرسکتا ہے۔

Shell Gear Oil

ہوسکتا ہے قارئین کے ذہنوں میں یہ سوال کلبلا رہا ہو کہ ٹرانسمیشن آئل یعنی گیئر آئل کیوں ضروری ہے؟ اس کاجواب تھوڑی تکنیکی نوعیت کا ہے۔ گاڑی کے انجن کی طرح گیئر باکس میں بھی کچھ ایسے پرزے ہوتے ہیں جو حرکت کرتے رہتے ہیں۔ گیئر آئل ان پرزوں کو چکنا رکھتا ہے جس سے یہ گرمی سے محفوظ رہنے کے ساتھ بغیر رکاوٹ حرکت کرتے رہتے ہیں۔ آٹو میٹک گاڑیوں میں یہ گیئر آئل انجن کو گاڑی کی رفتار بتانے کا ہی کام نہیں کرتا بلکہ گیئرباکس کے درجہ حرارت کو بھی قابو میں رکھتا ہے۔ کچھ گاڑیوں ، بالخصوص سنگل سلینڈر انجن والی موٹر سائیکلوں میں انجن آئل گیئر آئل کا بھی کام کرتا ہے۔ ہونڈا CG 125 یا مقامی سطح پر تیار ہونے والی کوئی بھی 70 سے 150 سی سی موٹر سائیکل میں نمی والا (wet-type) کلچ دیکھ سکتے ہیں۔اسی لیے ضروری ہے کہ اپنی گاڑی یا موٹر سائیکل کے ساتھ ہدایتی کتب کا بغور مطالعہ کریں اور اس میں درج ہدایات کی مناسبت سے تیل استعمال کریں۔

یہ بھی پڑھیں: بریکس خراب ہونے کی علامات؛ غفلت جان لیوا ثابت ہوسکتی ہے!

مینوئل ٹرانسمیشن

ہر گاڑی کے ساتھ ایک ہدایت نامہ (user manual) فراہم کیا جاتا ہے جس میں آئل تبدیل کرنے سے متعلق معلومات بھی شامل ہوتی ہیں۔ اس میں گیئر آئل تبدیل کرنے کے لیے بھی مخصوص مسافت لکھی ہوتی ہے جو تقریباً 40 ہزار کلومیٹر کے لگ بھگ ہوسکتی ہے۔ بہتر ہوگا کہ آپ اسی پر عمل کریں یا پھر کسی ماہر مکینک سے اس بارے میں مشورہ کرلیں۔ اگر آپ اونچی نیچی سڑکوں اکثر سفر کرتے ہیں تو گیئر آئل تبدیلی کے لیے بتائی گئی مسافت کو آدھا کردیں۔ یعنی اگر 40 ہزار کلومیٹر کے بعد گیئر آئل تبدیل کرتے ہیں تو اسے 20 یا زیادہ سے زیادہ 30 ہزار کلومیٹر کے بعد ہی تبدیل کروالیں۔ بڑی اور زیادہ وزن اٹھانے والی گاڑیوں میں بہرحال زیادہ تیل خرچ ہوتا ہے۔ مینوئل گیئرباکس آئل کی مفید بات ہے کہ یہ طویل عرصے تک اپنی افادیت برقرار رکھتا ہے البتہ خراب ہونے کا امکان بہرحال موجود ہے۔ مختلف پرزے جیسا کہ گیئرز، بیئرنگز وغیرہ کے درمیان تیل استعمال ہوتا رہتا ہے۔ کچھ گاڑیوں میں، بشمول مینوئل اور آٹو، دونوں ہی کے گیئر باکس میں چھوٹے مقناطیس موجود ہوتے ہیں جو بہنے والے دھاتی ذرات کو پکڑ لیتے ہیں۔ عام طور پر مینوئل گاڑیوں کے لیے GL-4 یا GL-5 گیئر آئل تجویز کیا جاتا ہے۔

man-gear

ہونڈا کی جانب مینوئل سِوک (Honda Civic) کے لیے SAE 10W-30 یا 10W-40 موٹر آئل تجویز کیا جاتا ہے بشرطیکہ اصلی ہونڈا مینوئل ٹرانسمیشن آئل دستیاب نہ ہو۔ کیوں کہ ہونڈا کے مطابق دیگر گیئر آئل میں دھاتی پرزوں کو محفوظ رکھنے کے لیے بنیادی خصوصیات شامل نہیں ہوتیں جو ان کے اپنے بنائے گئے آئل میں ہوتی ہیں۔ ہونڈا کے بقول متبادل آئل استعمال کرنے سے ٹرانسمیشن کی افادیت کمز ور پڑسکتی ہے۔

مٹسوبشی لانسر کے ہدایت نامہ کی ایک جھلک
Lancer Specs (1)

Lancer Specs (2)

آٹو میٹک ٹرانسمیشن

گیئر آئل کے معاملے میں آٹو میٹک ٹرانسمیشن اور مینوئل ٹرانسمیشن میں فرق ہے۔ آٹومیٹک ٹرانسمیشن میں یہ آئل گاڑی کو حرکت میں رکھنے کے لیے استعمال ہوتا ہے۔یہ پمپ میں جاتا ہے جو اسے گیئر کے پرزوں کی طرف دھکیل کر گاڑی کو چلنے میں مدد فراہم کرتا ہے۔ایسی گاڑیوں میں ایک ٹارک موجود ہوتا ہے جو انجن کو گیئر سے منسلک کرتا ہے۔ اس کے علاوہ بھی کافی تکنیکی نوعیت کی ہیرا پھیری جاری رکھتا ہے جسے یہاں بیان کرنا قدرے مشکل ہے۔ یاد رکھنے کی بات یہ ہے کہ تیل گیئر کو چلانے، مختلف گیئرز کے مطابق قوت فراہم کرنے اور پہیوں کو حرکت دینے کا کام کرتا ہے۔چونکہ ATF میں گھنٹی نما ٹرانسمیشن اور ٹارک کے ذریعے رفتار منتقل ہوتی ہے، اس لیے اس کا درجہ حرارت بڑھ جاتا ہے۔ اور یہی تپش اس کی کارکردگی پر منفی اثرات مرتب کرتی ہے۔ مینوئل گیئر آئل کی طرح ATF میں بھی مسلسل حرکت کرنے والے پرزوں کی گندگی شامل ہوجاتی ہے۔ اور یقین جانیئے، ان حرکت کرنے والی دھاتوں کو صاف رکھنا کوئی کھیل نہیں ہے!

آٹو میٹک ٹرانسمیشن کے لیے ہونڈا ATF-Z1 آئل تجویز کرتا ہے۔ اگر یہ دستیاب نہ ہو تو ڈیکسرون III آٹومیٹک ٹرانسمیشن آئل بھی متبادل کے طور پر استعمال کیا جاسکتا ہے۔ مٹسوبشی لانسر (Mitsubishi Lancer) کے ساتھ ملنی والی ہدایتی کتب کی ایک تصویر ذیل میں موجود ہے:

lancer automatic transmission

دیکھ بھال (Maintenance)

یہ بہت آسان کام ہے۔ اپنی گاڑی میں موجود آئل لیول چیک کرتے رہیں اور انہیں وقت پر تبدیل کرلیں۔ آٹو میٹک گاڑیوں میں آپ کو اس کا فلیوڈ فلٹر (fluid filter) بھی تبدیل کرلینا چاہیے۔گاڑی چاہے مینوئل ہو یا آٹومیٹک سب سے اہم بات یہ ہے کہ گیئر تبدیل کرتے وقت پورا دھیان رکھیں۔ جب گاڑی آگے کی جانب لے جانی ہو تو پچھلا گیئر (reverse) کبھی بھی استعمال نہ کریں۔ اس سے گیئر اور گاڑی دونوں ہی کو شدید نقصان پہنچ سکتا ہے۔

  • Zubair

    Sir mere pas axio g filder 2007 model os k gear k lye kon sa oil best he thank u

  • muhammad asif khan lodhi

    salam daihatsu hijet auto trans k lye kon sa oil best hai

  • muhammad asif khan lodhi

    plz reply me plzzzzz

Top