حکومت نے پیٹرول کی قیمت میں 2.41 روپے کی کمی کردی


حکومت پاکستان نے پیٹرولیئم مصنوعات کی قیمتوں میں 6 روپے تک کی کمی کی ہے۔

بتایا گیا تھا کہ نومنتخب حکومت مقامی صارفین کو سہولت دے گی اور ملک میں پیٹرولیئم مصنوعات کی قیمتوں کو کم کرے گی۔ اور جیسا کہ حکومت نے وعدہ کیا، ویسے ہی، آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی (اوگرا) کی تجویز کے مطابق، اس نے ستمبر 2018ء کے لیے پیٹرولیئم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کردی ہے۔ نئی قیمتیں کچھ یوں ہیں:

نئی قیمت پرانی قیمت فرق
پیٹرول 92.83 روپے 95.24 روپے 2.41 (کمی)
ہائی-اسپیڈ ڈیزل 106.57 روپے 112.94 روپے 6.37 (کمی)
مٹی کا تیل 83.50 روپے 83.96 روپے 0.46 (کمی)
لائٹ-اسپیڈ ڈیزل 75.96 روپے 75.37 روپے 0.59 (اضافہ)

پیٹرول، مٹی کے تیل، ہائی-اسپیڈ ڈیزل سے ہٹ کر دیکھیں تو لائٹ-اسپیڈ ڈیزل کی قیمتیں فی لیٹر 0.59 روپے بڑھی ہیں۔

چند روز قبل، ذرائع ابلاغ سے گفتگو کرتے ہوئے موجودہ وزير پیٹرولیئم غلام سرور خان نے اشارہ دیا تھا کہ حکومت پیٹرولیئم مصنوعات کی قیمتوں میں تبدیلی/نظرثانی کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ حکومت ٹیکس کو برقرار رکھے گی اور پیٹرولیئم مصنوعات کی قیمتیں بین الاقوامی مارکیٹ کے نرخوں کے مطابق کرے گی۔

اس حالیہ پیشرفت پر آپ کیا سمجھتے ہیں، ہمیں تبصروں میں ضرور آگاہ کیجیے۔


My name is M. Ali Laghari and I love to read and write about Cars.

Top