حکومت نے معذوروں کے لیے ڈیوٹی فری کار اِمپورٹ پالیسی میں ترمیم کر دی

0 10 449

وفاقی حکومت نے کسٹمز ڈیوٹی فری کاروں کی درآمد کے تحت معذور افراد کی اسکیم میں ترمیم کی اجازت دے دی ہے۔ حکومت نے نئی ترامیم کے تحت گاڑی امپورٹ کرنے والے فرد کے انکم بریکٹ میں اضافہ کر دیا ہے۔

وزیر اعظم  کے مشیر برائے خزانہ و ریونیو ڈاکٹر عبد الحفیظ شیخ نے کابینہ کی اقتصادی رابطہ کمیٹی (ECC) کے اجلاس کی صدارت کی۔

ڈیوٹی فری کار امپورٹس اسکیم میں ترامیم:

ترامیم کے مطابق:

  • ECC نے انکم بریکٹ کو ماہانہ 1,00,000 سے 2,00,000 روپے کر دیا ہے کہ جو پہلے 20,000 سے 1,00,000 روپے تھا۔
  • فرد کو اسکیم کے تحت گاڑی امپورٹ کرنے کی اجازت ہوگی اگر اس نے پچھلے دس سالوں میں کوئی گاڑی امپورٹ نہ کروائی ہو یا مقامی طور پر اسمبل شدہ کار نہ خریدی ہو۔
  • فرد کے پاس NTN سرٹیفکیٹ کا ہونا ضروری ہے اور وہ سالانہ ٹیکس ریٹرن فائل کرتا ہو۔

پالیسی کیا کہتی ہے:

فیڈرل بورڈ آف ریونیو (FBR) 2010ء نوٹیفکیشن کے مطابق ایک معذور فرد صرف ایک نئی کار امپورٹ کر سکتا ہے۔ نوٹیفکیشن مزید کہتا ہے کہ یہ کار 1350cc سے زيادہ کی نہیں ہونی چاہیے۔ اس کے علاوہ اس فرد کے پاس ڈرائیونگ لائسنس بھی ہونا چاہیے۔

پالیسی کے مسائل:

البتہ پالیسی کے ساتھ کچھ سنجیدہ قسم کے مسائل بھی ہیں۔ پہلی چیز یہ کہ معذور افراد کو صرف نئی کاریں امپورٹ کرنے کی اجازت کیوں دی جا رہی ہے۔ یہ بات قابلِ ذکر ہے کہ تازہ ترین ترمیم میں اس حوالے سے کوئی اپڈیٹ نہیں کیا گیا۔ یہاں سوال اٹھتا ہے کہ وہ دوسرے شہریوں کی طرح کوئي refurbished گاڑی کیوں امپورٹ نہیں کر سکتا۔

اس کے علاوہ فرد کو ضلعی سطح پر اپنا معذوری سرٹیفکیٹ حاصل کرنا ہوگا، پھر اسے صوبائی محکمہ صحت کے پاس جمع کرانا ہوگا۔ پھر ماہرینِ صحت اور اعلیٰ عہدیداروں پر مشتمل ایک بورڈ اس فرد کے ڈاکیومنٹس کی تصدیق کرے گا۔ اس کے بعد بورڈ اس معاملے کو وفاق کے پاس بھیجے گا، جہاں سے اس کیس کو حتمی منظوری ملے گی۔ ایک معذور فرد کے لیے یہ بہت لمبی کارروائی ہے۔

اس کے علاوہ معذور افراد کو ڈرائیونگ لائسنس جاری کرنے کے حوالے سے بھی سنجیدہ قسم کی کوتاہیاں ہیں۔ یہ افراد عام گاڑیوں پر ڈرائیونگ ٹیسٹ نہیں دے سکتے، جس کی وجہ سے ان کے لیے لائسنس حاصل کرنا مشکل ہو جاتا ہے۔

اس لیے حکومت کو معذور افراد کے لیے اس عمل کو آسان بنانا چاہیے، اور لوکل کار مینوفیکچررز کو شامل کرنا چاہیے۔ لوکل کمپنیاں معذور افراد کے لیے خصوصی گاڑیاں بھی بنا سکتی ہیں، جو ان کے لیے ایک سستی لوکل گاڑی حاصل کرنا آسان بنائیں گی۔

 

Google App Store App Store

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.