پنجاب کی مہنگی ترین کار رجسٹریشن!

0 3 618

پنجاب ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن ڈپارٹمنٹ نے بالآخر صوبے کی مہنگی ترین کار رجسٹریشن مکمل کر لی ہے۔ لاہور کے ایک رہائشی نے لمبورگینی ہوراکان اسپائیڈر امپورٹ کی تھی اور انہیں یہ گاڑی رجسٹر کروانے میں مشکل کا سامنا کرنا پڑ رہا تھا۔

خبروں کے مطابق گاڑی کی قیمت 11 کروڑ روپے ہے۔ جبکہ اس کی رجسٹریشن 45 لاکھ روپے سے زیادہ کی پڑی ہے۔

Most Expensive Car Registration

پنجاب کی مہنگی ترین گاڑی کی رجسٹریشن میں مسائل:

اس سے پہلے صوبائی محکمے نے اسپورٹس کار کی رجسٹریشن سے معذرت کر لی تھی کیونکہ رجسٹریشن کے لیے گاڑی کی قیمت کی حد 10 کروڑ روپے تھی۔ حکام نے میڈیا کو بتایا تھا کہ «ڈپارٹمنٹ اس سے زیادہ قیمت کی کوئی گاڑی رجسٹر نہیں کر سکتا۔»

البتہ مزید بتایا گیا کہ محکمے نے قواعد میں تبدیلیاں کیں، اپنے سافٹ ویئر کو اپڈیٹ کیا اور پھر کار کو رجسٹر کر لیا۔

اس سے پہلے کار کے مالک نے میڈیا کو بتایا کہ وہ اب بھی اپنی گاڑی رجسٹر نہیں کروا پا رہے۔ پچھلے ہفتے انہوں نے کہا تھا کہ «میں دس دنوں سے ایکسائز آفس آ رہا ہوں، لیکن مجھے حیرت ہے کہ ایسی گاڑیاں رجسٹر کرنے کے لیے پنجاب میں کوئی قانون موجود نہیں۔»

لمبورگینی سے پہلے پنجاب میں رجسٹر ہونے والی مہنگی ترین گاڑی مرسڈیز GT سیریز تھی۔ اس گاڑی کی قیمت تقریباً 10 کروڑ تھی۔ ایکسائز ڈپارٹمنٹ کو اس گاڑی کی رجسٹریشن فیس کے طور پر 35 لاکھ روپے ملے تھے۔

لمبورگینی ہوراکان:

یہ سپر کار 5.2L انجن کے ساتھ آتی ہے اور اپنے انوکھے ایکسٹیریئر کی وجہ سے مشہور ہے۔ یہ کار فرنٹ پر خاص طور پر ڈیزائن کیے گئے وِنگز رکھتی ہے، تاکہ ہوا کو اچھی طرح کاٹ سکے اور گاڑی اپنی زیادہ سے زیادہ رفتار تک باآسانی جا سکے۔ یہی وجہ ہے کہ اس کار کا اگلا حصہ ایروڈائنامک اور چھوٹا اور پچھلا حصہ ذرا چوڑا ہے۔ اس کے علاوہ اس کے فرنٹ میں پارکنگ سینسرز اور ایئر اِن ٹیک وینٹس ہیں۔

یہ کار تین ڈرائیونگ موڈز رکھتی ہے، اسٹینڈرڈ ڈرائیو کے لیے اسٹراڈا، پھر اسپورٹ اور آخر میں کورسا، جو ٹریک ریس کے لیے ہے۔

اس کار کے دلچسپ فیچرز میں سے ایک اس کا ہائیٹ کنٹرول (height control) آپشن ہے۔ آپ کونسول پر موجود ایک بٹن دبا کر اس گاڑی کی اونچائی میں اضافہ کر سکتے ہیں۔ اس فیچر کی مدد سے یہ گاڑی اسپیڈ بریکرز اور گڑھوں سے انڈر باڈی ٹکرائے بغیر پاکستانی سڑکوں پر چلائی جا سکتی ہے۔ البتہ 60کلومیٹرز فی گھنٹہ کی رفتار کے بعد یہ کار اپنی اصل اونچائی پر واپس آ جاتی ہے تاکہ گاڑی کی اسٹیبلٹی اور ٹریکشن میں اضافہ ہو جائے۔

2018ء ماڈل پاکستان کی آٹھویں لمبورگینی اور دوسری لمبورگینی کنورٹیبل ہے۔

اس کار پر پاک ویلز کا ریویو دیکھیں:

Google App Store App Store

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.