ٹویوٹا C-HR: پاکستان میں مشہور ہونڈا وِزل ہائبرڈ کی ممکنہ متبادل

2017-Toyota-C-HR-45

گزشہ دہائی سے کراس اوور گاڑیوں کے رجحان میں کافی تیزی نظر آرہی ہے۔ تقریباً ہر کار ساز ادارہ اپنی گاڑیوں کو اس انداز یں پیش کر رہا ہے۔ پاکستان میں اس کی بہترین مثال ہونڈا وِزل (Honda Vezel) کی صورت میں موجود ہے۔تکنیکی اعتبار سے کراس اوور ایسی مسافر گاڑیاں ہوتی ہیں جن میں بڑے پہیے لگائے جاتے ہیں اور ان کی اونچائی و لمبائی بھی عام گاڑیوں کی بنسبت زیادہ ہوتی ہے۔ یہ ایک طرح کی چھوٹی SUV جیسی ہوتی ہیں۔ بہت سے لوگ SUV اور کراس اوور کو ایک ہی طرز خیال کرتے ہیں جبکہ حقیقت میں یہ دونوں بالکل علیحدہ طرح کی گاڑیاں ہوتی ہیں۔ پچھلے چند سالوں کے دوران ملک میں کراس اوور گاڑیوں کی مقبولیت بڑھ رہی ہے۔ یہ ہونڈا وِزل ہی کی کامیابی تھی کہ جس نے ہونڈا ایٹلس کو پاکستان میں Honda HR-V متعارف کروانے کی طرف راغب کیا۔ وِزل کے علاوہ جو کراس اوور جاپان سے پاکستان درآمد کی گئیں ان میں نسان جوک (Nissan Juke) بھی شامل ہے۔

متعلقہ تحریر: ہونڈا HR-V اور ہونڈا وِزل ہائبرڈ؛ جامع و مختصر جائزہ

جاپان کی مقامی مارکیٹ کے علاوہ یورپ اور ریاستہائے متحدہ امریکا میں بھی ہونڈا وِزل اور HR-V نے قابل ذکر کامیابی سمیٹی۔ اسی کو دیکھتے ہوئے ہونڈا کے ہم وطن حریف ادارے ٹویوٹا نے بھی چند سال قبل کراس اوور گاڑیوں کے میدان میں اترنے کا فیصلہ کیا۔ پچھلے سال ٹویوٹا کی جانب سے نئی کراس اوور ٹویوٹا C-HR کے کچھ خاکے پیش کئے گئے تھے جو میرے ذاتی خیال میں کافی عجیب نظر آرہے تھے۔

پاک ویلز کے ذریعے ہونڈا وِزل پاکستان منگوائیں

Toyota C-HR Can Be A Potential Honda Vezel Killer

Toyota C-HR Can Be A Potential Honda Vezel Killer

آج ٹویوٹا نے پہلی مرتبہ باضابطہ طور پر اپنی کراس اوور C-HR کی نئی تصاویر ظاہر کردی ہیں جن میں نظر آنے والی گاڑی پچھلے سال پیش کئے گئے خاکوں سے بہت مختلف اور بہتر نظر آرہی ہے۔ اصلی کراس اوور کا انداز کافی خوبصورت اور جاذب نظر ہے۔ ٹویوٹا C-HR کے لیے پرایوس (Toyota Prius) کے زیر استعمال ٹویوٹا کا نیا عالمی آرکیٹیکچر (TNGA) استعمال کیاگیا ہے۔ تصاویر میں دکھائی گئی گاڑی کے عقب میں ہائبرڈ کا بیج دیکھا جاسکتا ہے جس سے ظاہر ہوتا ہے کہ یہ گاڑی پیٹرولانجن اور ہائبرڈ موٹر کے ساتھ پیش کی جائے گی۔ تصاویر کے ساتھ ٹویوٹا نے کسی بھی قسم کی تکنیکی معلومات فراہم نہیں کیں لیکن ماہرین کے خیال میں اسے 1800 سی سی 4 سلینڈر پیٹرول انجن + ہائبرڈ برقی موٹر کے ساتھ پیش کیا جائے گا۔ پرایوس کی طرح نئی C-HR میں eCVT گیئرباکس شامل ہونے کا بھی امکان ہے۔

یہ بھی پڑھیں: ہونڈا وِزل RS: پاکستانیوں کی پسندیدہ وِزل ہائبرڈ کا جدید انداز

ٹویوٹا C-HR کی تازہ تصاویر دیکھ کر اندازہ لگایا جاسکتا ہے کہ مستقبل قریب میں ہونڈا وِزل کو سخت حریف کا سامنا کرنا پڑے گا۔ مجھے پوری توقع ہے کہ ہونڈا اور ٹویوٹا کے مداح اپنی من پسند برانڈ کی خصوصیات اور انفرادیت کے اظہار میں آگے آگے رہیں گے۔ نیز مجھے یہ بھی توقع ہے کہ ہونڈا کے شائقین کی تیز نگاہیں دسویں جنریشن ہونڈا سِوک (Honda Civic 2016) اور ٹویوٹا کراس اوور کی پچھلی لائٹس میں کچھ مماثلت بھی محسوس کریں گی۔

اپنے قارئین کے لیے ہم بہت جلد مزید تفصیلات کے ساتھ حاضر ہوں گے۔ ہمارے ساتھ رہیے!

2017-Toyota C-HR Can Be A Potential Honda Vezel Killer

2017-Toyota C-HR Can Be A Potential Honda Vezel Killer

2017-Toyota C-HR Can Be A Potential Honda Vezel Killer

2017-Toyota C-HR Can Be A Potential Honda Vezel Killer

Fazal Wahab

I am Civil Engineer by Profession and have love for High Rise Towers and Underground construction. But Automobiles is my first love. Its my passion to know and share about anything new in automobile industry.

  • Salman

    What will be its price in pakistan?

Top