ہونڈا بی آر-وی فیس لفٹ پر پہلی نظر


ہونڈا اٹلس نے لاہور کے رائل پام گالف اینڈ کنٹری کلب میں منعقدہ ایک تقریب کے دوران BR-V فیس لفٹ متعارف کروایا۔ اس گاڑی میں کیا کچھ نیا ہے؟ آئیے اس بارے میں بات کرتے ہیں اور یہ بھی کہ یہ کس طرح فیس لفٹ سے پہلے والی گاڑی سے بہتر ہے؟  

ایکسٹیریئر: 

ہونڈا BR-V ایک MMC (مائنر ماڈل چینج) کے طور پر آئی ہے، جس میں ایک نئے فوگ لائٹ ڈیزائن کے ساتھ بہتر فرنٹ کروم گرِل موجود ہے، جو اب زیادہ چوکور شکل رکھتی ہے۔ اٹلس نے اِس کار میں پروجیکٹر ہیڈلائٹس بھی شامل کی ہیں، جو اس سے پہلے ہیلوجن تھیں۔ ہونڈا نے گاڑی میں اسٹینڈرڈ کے طور پر سَن وائزرز کو بھی شامل کیا ہے؛ جو بارش اور دھوپ کے دنوں میں مددگار ہوتے ہیں۔ BR-V کے پچھلے حصے میں کمپنی نے بمپرز کے اندر نئے ڈیزائن کردہ رفلیکٹرز شامل کیے ہیں، جو اسے ایک چوڑی چکلی صورت دیتے ہیں۔ یہ بھی نہ بھولیں کہ ایک خوبصورت شارک فِن انٹینا بھی اس میں شامل کیا گیا ہے۔ ڈیلرز کے مطابق اس کی بہت زیادہ ڈیمانڈ تھی۔ 

انٹیریئر: 

انٹیریئر میں سب سے نمایاں تبدیلی کار میں پُش اسٹارٹ کا اضافہ ہے۔ یوں یہ خودکار طور پر کِی لیس اِنٹری شامل کر دیتی ہے۔ اس گاڑی میں صارفین کو جن سب سے بڑے مسائل کا سامنا تھا اُن میں سے ایک سینٹر آرم ریسٹ کی عدم موجودگی تھی، جسے اس ورژن میں شامل کردیا گیا ہے۔ BR-V کے لمیٹڈ ایڈیشن کی طرح اس میں اسٹیپ گارنِش اب اسٹینڈرڈ کے طور پر شامل کردی گئی ہے جس سے BR-V ماڈلز کو ذرا اونچا لُک مل رہا ہے۔ گارنِش اس کومپیکٹ SUV میں اگلے اور پچھلے دونوں حصوں میں دیکھی جا سکتی ہے۔ 

نیچے اس گاڑی کا وڈیو ریویو دیکھیں: 

ڈِگی: 

اس سے پہلے اس گاڑی کی ڈِگی ایک بٹن دبانے سے کھلتی تھی۔ حیران کن طور پر اس مرتبہ ہونڈا نے ایکtouch sensitive  بٹن شامل کیا ہے، صرف ڈِگی کو چھوئیں اور یہ کھل جاتی ہے۔ اس کے علاوہ ڈِگی کی گنجائش اور تیسری قطار کے مسافروں کی سیٹیں سب پہلے جیسی ہی ہیں۔ 

فیچرز: 

آرم ریسٹ کا ذکر کرنے کے ساتھ یہ بھی بتاتے چلیں کہ اس میں آپ کی ڈیوائسز کے لیے USB چارجنگ کا آپشن بھی شامل ہے۔ دیگر تبدیلیوں میں انٹیریئر کی نئی اور بہتر کلر اسکیم اور گاڑی کی ایئر کنڈیشننگ کے لحاظ سے چند تبدیلیاں شامل ہیں۔ اس سے پہلے ہونڈا BR-V میں ایئر کنڈیشننگ کو ٹھنڈی ہوا دینے میں تقریباً 20 سیکنڈز لگتے تھے۔ ڈیلر کے مطابق فیس لفٹ ماڈل میں صرف 10 سے 11 سیکنڈز لگتے ہیں۔ سیفٹی کے لحاظ سے ہونڈا نے بالآخر اپنی BR-V کو ڈوئل فرنٹ ایئر بیگز سے لیس کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے۔ پرانے ورژن میں صرف ڈرائیور کے لیے ایک ایئر بیگ تھا۔ ایک اور قابلِ ذکر اضافہ گیئر بکس لیور کے ساتھ ڈرائیور کی طرف کے دروازے میں بھی گائیڈ لائٹس کی شمولیت ہے، جو ڈرائیور کے لیے اندھیرے میں ڈرائیور کے لیے دونوں کو تلاش کرنا آسان بناتی ہیں۔ پرانے ماڈل کے حوالے سے بڑی شکایتوں میں سے ایک یہ بھی تھی۔ 

پچھلی سیٹیں:

فیس لفٹ سے پہلے کے ماڈل میں دوسری قطار میں ہیڈ ریسٹ نہیں تھے، لیکن اب یہ شامل کردیے گئے ہیں۔ آرام کے معاملے میں نیاورژن پچھلی سیٹوں کی بہتر کُشننگ کی وجہ سے زیادہ بہتر ہے، جو لمبے سفر کو زیادہ پر سکون بناتی ہے۔ عوام نے اس فیس لفٹ سے پہلے کی BR-V میں پچھلی سیٹوں کے آرام نہ ہونے کی کافی شکایت کی تھی۔ 

قیمت: 

ہونڈا اٹلس نے BR-V کے فیس لفٹ ورژن کی قیمت بڑھا دی ہے اور اب یہ اِن قیمتوں پر آتی ہے: 

BR-V I-VTEC M/T : 28 لاکھ 99 ہزار روپے 

BR-V I-VTEC CVT: 32 لاکھ 49 ہزار روپے 

کمپنی کے مطابق گاڑی 10 لاکھ روپے کی ادائیگی پر بُک کروائی جا سکتی ہے کہ جس کی ڈلیوری کا وقت ایک مہینے ہوگا۔ مزید برآں، ہونڈا کے تمام مجاز ڈیلرز صارفین کی سہولت کے لیے اتوار کو بھی کھلے ہوں گے۔ 

ہماری طرف سے اتنا ہی، اپنے خیالات نیچے تبصروں میں پیش کیجیے۔


Google App Store App Store
Awais Yousaf

I'm a crazy car guy. I want an aeroplane hangar full of cars. Is that too much to ask for?

Top